سینیٹ کے انتخابات میں پیسے کا استعمال باعث شرم ہے: سراج الحق

سینیٹ کے انتخابات میں پیسے کا استعمال باعث شرم ہے: سراج الحق

  

اسلام آباد(صباح نیوز) امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ ہر سطح کے الیکشن کو صاف شفاف اور غیر جانبدار بنانے کے لیے الیکشن کمیشن کے پاس غیر معمولی اختیارات ہیں مگر الیکشن کمیشن اپنے ان اختیارات کو استعمال کرتاہے اور نہ اپنے بنائے ہوئے ضابطہ اخلاق کی پاسداری کی طرف توجہ دیتاہے ۔ سینیٹ کے انتخابات میں پیسے کا استعمال باعث شرم ہے ۔ سیاسی جماعتیں اپنے اندر سے ایسی کالی بھیڑوں کو نکال باہر کریں جو دولت کے بل بوتے پر لوگوں کے ضمیر کا سودا کرتی ہیں ۔ سیاسی جماعتوں کو نظر رکھنی چاہیے کہ وہ کن لوگوں کو ٹکٹ دے رہی ہیں ۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے سینیٹ اجلاس میں شرکت کے بعد پارلیمنٹ کے باہر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ جب تک انتخابی نظام درست نہیں ہوتا ، عوام کی حقیقی قیادت سامنے نہیں آسکتی ۔ الیکشن کمیشن 2018 ء کے انتخابات سے قبل انتخابی نظام کی درستگی اور اصلاحات کے نفاذ کی طرف توجہ دے ۔ انہوں نے کہاکہ جس طرح سینیٹ کے انتخابات کو دولت کا کھیل بنادیا گیاہے اور ممبران اسمبلی کی منڈی کے جانوروں کی طر ح بڑھ چڑھ کر بولیاں لگائی جارہی ہیں ، وہ انتہائی شرمناک اور ایوان بالا کی توہین کے مترادف ہے ۔انہوں نے کہاکہ الیکشن کمیشن اب یہ بہانہ نہیں بنا سکتاکہ اس کے پاس اختیار نہیں، الیکشن کمیشن کو تمام اختیارات حاصل ہیں لیکن وہ اربوں کھربوں میں کھیلنے والے جاگیرداروں اور سرمایہ داروں پر ہاتھ ڈالنے سے ڈرتاہے ۔ انہوں نے کہاکہ سیاسی دباؤ میں آ کر مصلحت اختیار کر لینا مسائل کا حل نہیں بلکہ مسائل کو مزید گھمبیر بناتاہے ۔

مزید :

صفحہ آخر -