خیبرپختونخوا پولیس کا چھاپہ، پولیس اہلکار اور 3 خواتین رنگے ہاتھوں گرفتار، کیا کررہے تھے؟ دیکھ کر چھاپہ مار ٹیم کے گال بھی شرم سے لال ہوگئے کیونکہ ۔ ۔۔

خیبرپختونخوا پولیس کا چھاپہ، پولیس اہلکار اور 3 خواتین رنگے ہاتھوں گرفتار، ...
خیبرپختونخوا پولیس کا چھاپہ، پولیس اہلکار اور 3 خواتین رنگے ہاتھوں گرفتار، کیا کررہے تھے؟ دیکھ کر چھاپہ مار ٹیم کے گال بھی شرم سے لال ہوگئے کیونکہ ۔ ۔۔

  

پشاور (ویب ڈیسک) تھانہ فقیر آباد پولیس نے نوجوان نسل کو بے راہ روی کی جانب گامزن کرنے اور فحاشی پھیلانے کی عوامی شکایت پر وزیر کالونی میں قحبہ خانہ پر چھاپہ مارکر پولیس اہلکار سمیت چھ مردوں اور تین خواتین کو رنگ رلیاں مناتے ہوئے گرفتار کرلیا۔

ایس ایس پی آپریشنز پشاور جاوید اقبال کو عوام الناس کی طرف سے شکایت موصول ہوئی تھی کہ تھانہ فقیر آباد کی حدود وزیرکالونی میں ایک خاتون نے کرایہ پر مکان حاصل کیا جس میں مکروہ دھندہ کی آڑ میں کاروبار کرتی ہے۔ اس اطلاع پر ایس ایس پی آپریشنز جاوید اقبال نے ایس پی سٹی شہزادہ کوکب فاروق کی نگرانی میں ڈی ایس پی فقیر آباد طاہر داوڑ ، ایس ایچ او فقیر آباد نور حیدر خان بمعہ دیگر نفری پولیس پر مشتمل ٹیم تشکیل دی جنہوں نے مکان پر چھاپہ مار کر قتل کے مقدمہ میں مطلوب مجرم اشتہاری ساجد ولد جمیل سکنہ کتوزئی شبقدر حال ریلوے کوارٹر سٹیشن، غلام حیدر ولد عرفان سکنہ شبقدر، مصری خان ولد خیر اللہ سکنہ چغر مٹی، عماد علی ولد ساجد علی سکنہ دیر کالونی، ماہر ولد امبر خان سکنہ گندیگار، سید نبی ولد طلا جان سکنہ جمرود، لعل دان ولد مردان سکنہ لنڈی کوتل، سماة گل دری، مسماة مریم، مسماة لائبہ کو قابل اعتراض حالت میں گرفتار کرکے مقدمات درج کرلئے۔

گرفتار ہونے والوں میں دیر پولیس کا اہلکار بھی شامل ہے جو ٹریننگ کے لئے ہنگو ٹریننگ سنٹر گیا ہوا تھا اور وہاں سے پولیو ڈیوٹی کے لئے پشاور آیا تھا۔ فقیر آباد پولیس نے گرفتار ہونے والے مرد اور خواتین کا ایک روزہ ریمانڈ حاصل کرلیا، خواتین سے جیل میں تفتیش کی جائے گی۔

مزید :

علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -