نواز شریف کو جی ٹی روڈکی بجائے موٹر وے سے جانے کی تجویز سیکورٹی بنا پر دی گئی تھی: سعد رفیق

نواز شریف کو جی ٹی روڈکی بجائے موٹر وے سے جانے کی تجویز سیکورٹی بنا پر دی گئی ...
نواز شریف کو جی ٹی روڈکی بجائے موٹر وے سے جانے کی تجویز سیکورٹی بنا پر دی گئی تھی: سعد رفیق

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق کا کہنا ہے کہ نواز شریف کو جی ٹی روڈکی بجائے موٹر وے سے جانے کی تجویز سیکورٹی بنا پر دی گئی تھی انہیں یہ تجویز چار، پانچ سینئر رہنماوں نے دی اسے کسی ایک شخص کے ساتھ منسوب کرنا مناسب نہیں،وزیراعلی پنجاب شہباز شریف اور بعض پارٹی رہنماوں نے نواز شریف کو جی ٹی روڈ کا خطرہ مول نہ لینے کا مشورہ دیا تھا۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مسلم لیگ نواز کے صدر نواز شریف نے سابق وزیر داخلہ چوہدری نثار سے متعلق کوئی بیان نہیں دیا، موٹر وے کے ذریعے لاہور روانگی کی تجویز سیکیورٹی خدشات پر دی گئی، جبکہ صحافیوں کے ایک وفد نے ان کو موٹروے سے نہ جانے کی تجویز دی تھی،جس کے بعد نواز شریف کی جی ٹی روڈ کے ذریعے روانگی کا فیصلہ کیا گیا ۔سعد رفیق کہتے ہیں کہ نیب اصل لوگوں کے پیچھے نہیں جاتا، صرف سیاسی لوگوں کے گلوں پر ہاتھ ڈالتا ہے، سرخیاں بنانے کے لئے سیاسی لوگوں کو رگڑا جارہا ہے۔انہوں نے کہا کہ نیب کے پاس کیس لے کر گئے لیکن کوئی پیشرفت نہیں ہوئی، ہم اگر کوئی بات کرتے ہیں تو پھر توہین کا کہا جاتا ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ عدالتیں ہمیں بہت کم سنتی ہیں اور فیصلے آجاتے ہیں، جو فراڈ کرنے والے ہیں ان کا بھی تو احتساب ہونا چاہیے۔سعد رفیق نے امید ظاہر کی کہ نواز شریف اور چوہدری نثار کا معاملہ جلد حل ہوجائے گا۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -پنجاب -