توانائی کے حصول کیلئے قدرتی ذرائع پر انحصار کرنا ہو گا،ڈاکٹر شاہد منیر

  توانائی کے حصول کیلئے قدرتی ذرائع پر انحصار کرنا ہو گا،ڈاکٹر شاہد منیر

  



لاہور (لیڈی رپورٹر)پنجاب یونیورسٹی انسٹی ٹیوٹ آف انرجی اینڈ انوائرنمنٹل انجینئرنگ کے زیر اہتمام پاکستان انسٹیٹیوٹ آف کیمیکل انجینئرز کی گولڈن جوبلی پر آل پاکستان کیمیکل انجینئرنگ کنونشن میں وائس چانسلر یونیورسٹی آف جھنگ پروفیسر ڈاکٹر شاہد منیر،وائس چانسلر خواجہ فرید یونیورسٹی رحیم یار خان پروفیسر ڈاکٹر سلمان طاہر، وائس چانسلر محمد نواز شریف یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی ملتان ڈاکٹر عامر اعجاز،صدر پاکستان انسٹیٹیوٹ آف کیمیکل انجینئرز انجینئر خالد بشیر،جنرل سیکریٹری پروفیسر ڈاکٹر محمود سلیم،ڈین فیکلٹی آف انجینئرنگ یو ای ٹی پروفیسر ڈاکٹر نوید رمضان ودیگر نے شرکت کی۔اپنے خطاب میں ڈاکٹر شاہد منیر نے پاکستان کے مختلف تونائی کے ذرائع پر تفصیلی رپورٹ پیش کرتے ہوئے تونائی کے حصول کے لئے پاکستان کو بیرونی ذرائع کی بجائے اپنے قدرتی ذرائع پر انحصار کرنے پر زور دیا۔ڈاکٹر سلمان طاہر نے انجینئرنگ کے نصاب کا از سرِ نو جائزہ لینے اور اس کو جدید تقاضوں کے مطابق ہم آہنگ کرنے پر زور دیا۔

ڈاکٹر عامر اعجاز نے ملکی ترقی کے لئے انجینئرز کی اہمیت بیان کی اور انجینئرز کوامپورٹ میں کمی کے لئے کردار ادا کرنے پر زور دیا۔اس موقع پر 50ویں سالانہ جنرل باڈی کے اجلاس میں ڈاکٹر محمود سلیم اور ڈاکٹر سلمان طاہر کی تعلیمی خدمات کے اعتراف میں پاکستان انسٹی ٹیوٹ آف کیمیکل انجینئرز گولڈ میڈل سے نواز ا گیاجبکہ سال2020-2021 کے لئے پنجاب یونیورسٹی انسٹی ٹیوٹ آف انرجی اینڈ انوائرنمنٹل انجیئنرنگ کے پروفیسر ڈاکٹر محمود سلیم صدر، چیئرمین شعبہ کیمیکل انجینئرنگ یو ای ٹی لاہور کے ڈاکٹر ظفر نونر کو سینئر نائب صدر، ڈین فیکلٹی آف انجینئرنگ یو ای ٹی لاہور کے ڈاکٹر نوید رمضان کو سیکرٹری اور ڈاکٹر خرم شہزاد کو جوائنٹ سیکرٹری منتخب کیا گیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1