سرکاری کی طرح پرائیویٹ سکیم کی سرپرستی بھی وزارت مذہبی امور کی ذمہ داری

سرکاری کی طرح پرائیویٹ سکیم کی سرپرستی بھی وزارت مذہبی امور کی ذمہ داری

  



لاہور (ڈویلپمنٹ سیل)سرکا ری سکیم کا حج کرایہ اور ریا ل کی قیمت کم کرنے کا خیر مقدم کرتے ہیں۔سزا ء اور جزاء کے حوالے سے وفاقی مذ ہبی امور کابیان حوصلہ افزاء ہے۔ سرکاری اور پرائیوٹ سکیم کا حج کرایہ اور ریال کی قیمت یکساں رکھی جا ئے،پرائیوٹ سکیم کیلئے سزاء کیساتھ جزا ء کا نظام بھی قائم کیا جائے۔پاکستان میں بڑھتی ہوئی پرائیوٹ حج سکیم کی ڈیمانڈ کے پیش نظر سعودیہ سے آنیوالے اضافی کوٹہ کو پرائیوٹ حج سکیم کو دیا جائے۔کاٹا گیا کوٹہ بحال کیا جائے، 50والوں کا کوٹہ بڑھایا جائے۔ ان خیالات کا اظہار ہو پ اسلام آباد زون کے چیئرمین قاضی جمیل جابر نے ”روز نامہ پاکستان“سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہو ں نے کہا کہ حج پالیسی کا اعلان خوش آئندہے مگر حج تفصیلا ت نہ دینا ابہام پیدا کررہاہے۔قاضی جمیل نے بتا یا سرکاری سکیم کی طرح پرائیویٹ سکیم کی سرپرستی بھی وزارت مذہبی امور کی ذمہ داری ہے، مانیٹرنگ،سروس پرویڈر،حج پیکجز کے حوالے سے ہوپ سے مشاورت کی جائے، ائیر لائنزکو حج 2020ء میں کم از کم وزن 46کلو لانے کا پابند کیا جا ئے۔ انہوں نے کہا کوئٹہ مشاورتی ورکشا پ میں وفاقی وزیر نے جزاء اور سزا ء کے نظا م کی بات کی ہے، خیر مقدم کرتے ہیں، پرا ئیویٹ سکیم میں اب تک سزا ء کا نظا م نافذ ہے جزاء کا نظام قائم کیا جائے تاکہ اچھا کام کرنیوالوں کی حوصلہ افزائی ہو سکے۔50کوٹہ والوں کا کوٹہ کم از کم دو بسو ں کا کیا جائے۔

قاضی جمیل

مزید : صفحہ آخر