واپڈا ہلکار پر تشدد کرنے والوں کو گرفتار کیا جائے،جاوید خان

  واپڈا ہلکار پر تشدد کرنے والوں کو گرفتار کیا جائے،جاوید خان

  



بٹ خیلہ(بیورورپورٹ) واپڈااہلکار کو کلہاڑی سے شدید زخمی کرنے والے ملزمان کے عدم گرفتاری اور واپڈا ملازمین کو مکمل تحفظ نہ ملنے کے خلاف واپڈا ہائیڈرو یونین ڈویژن درگئی کے ڈویژنل چیئرمین جاوید خان، جنرل سیکرٹری طارق عظیم،سرکل وائس چیئرمین ملک نورزاد خان، حیات محمد خان، ہاشم خان، شیر محمد خان، شاہ حسین خان، رفیع اللہ خان، خالد خان،فضل راز ق خان، وہاب گل خان، گوہر خان اور دیگر نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ اغی گڑھ ہیروشاہ میں احسان سہیل لائین سرنٹنڈنٹ نے دیگر سٹاف کے ہمراہ بوگس ایل ٹی لائین اور ڈائریکٹ کنڈوں کے خلاف کاروائی میں مصروف تھا کہ اسی اثناء میں تاج محمد اور ان کے بیٹے نگار خان نے آکر احسان سہیل پر کلہاڑی سے وار کر کے شدید زخمی کردیا جس پر ایکسئن شیررحمان خان نے ایکشن لیتے ہوئے ڈی سی ملاکنڈ کوآگاہ کیا اور تھانہ قائد آباد نے ملزمان کے خلاف ایف آئی آر درج کی۔ تا ہم 24گھنٹے گزر جانے کے باوجود ملزمان کو گرفتار نہ کرنے پر آفسوس کااظہار ہی کیاجاسکتاہیاگر اسی طرح واپڈا ملازمین کو تحفظ نہ ہو تو ہم کام چھوڑ احتجاج پر مجبور ہونگے۔انہوں نے ملزمان کے گرفتاری کیلئے 48گھنٹے کا الٹی میٹم دیتے ہوئے کہاکہ اگر اس دوران ملزمان کو گرفتار نہ کیاگیا توہم مکمل اور بھرپور احتجاج کاراستہ اپنائیں گے جو پورے ملاکنڈ ڈویژن کے سطح پر ہوگااور بعد ازاں پورے صوبے تک پھیلایاجائے گا۔انہوں نے کہاکہ ایک طرف سٹاف کی انتہائی کمی ہے دوسری طرف گاڑیوں کا مسئلہ ہے ساتھ میں عوام کو بلا تعطل بجلی فراہمی کیلئے بجلی چوری کو روکنا ہے ایسے میں جب ملازمین عدم تحفظ کاشکار ہو توہم کس طرح ڈیوٹی دے سکتے ہیں۔ انہوں نے وفاقی وزیر عمرایوب خان، وزیر داخلہ، وزیر اعلیٰ خیبر ُختونخواہ، کمشنر ملاکنڈ، آئی جی خیبر ُختونخوا، چیف ایگزیکٹیو پیسکو پشاور اور دیگر اعلیٰ حکام سے بھرپور مطالبہ کیاہے کہ ملزمان کو فوری طور پر گرفتار کیاجائے اور واپڈاملازمین میں پائی جانے والے غصے اور بے چینی کاادراک کیاجائے بصورت دیگر ہم ہر قسم کام چھوڑ ہڑتال کریں گے جس کی ساری ذمہ دار ی ملاکنڈ انتظامیہ اور صوبائی حکومت پر عائد ہوگی۔

مزید : پشاورصفحہ آخر