تونسہ:اراضی تنازع پر دو افراد قتل، نو ماہ بعد بھی ملزم بدستور آزاد، ورثاء کا احتجاج

تونسہ:اراضی تنازع پر دو افراد قتل، نو ماہ بعد بھی ملزم بدستور آزاد، ورثاء کا ...

  

 تونسہ شریف(نمائندہ پاکستان)نوماہ قبل تونسہ شریف کے نواحی علاقہ بستی بولانی میں دوافراد کو زمین کے تنازع پر قتل کردیاگیاتھا اس  دہرے قتل کے مین  ملزمان کی عدم گرفتاری پر لواحقین کا کلمہ چوک پر خواتین اور بچوں سمیت  احتجاج   کیا اس موقع پر لواحقین کاکہنا(بقیہ نمبر12صفحہ10پر)

تھا کہ مقتول حمید اللہ اور حبیب اللہ کو نو ماہ قبل زمین کے تنازعہ پر قتل کیا گیا   تھانہ ریتڑہ پولیس جاگیردار کے ملزم بیٹوں کو گرفتار کرنے میں ناکام ہے  جاگیردار مصطفی میرانی کی جانب سے آئے روز علاقہ چھوڑنے،قتل کی دھمکیاں دی جا رہی ہیں  مقامی سردار نے ہمار ے دونوجوانوں کوقتل کرنے کے بعداب ہمارے لیے زندگی تنگ کردی ہے انہوں نے  وزیراعظم پاکستان عمران خان اور وزیراعلی پنجاب سردارعثمان احمدخان بزدار  سے اپیل کی ہے کہ ہمارے نوجوانوں کے قاتل مقامی سردارکے بیٹوں کوفوری گرفتارکیاجائے اورہماری متاثرہ فیملی کواس ظالم سردارکے ظلم سے بچایاجائے  ہمیں تحفظ فراہم کیاجائے  ایس ایچ اورتھانہ ریتڑہ نے میڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے کہاکہ  دس ملزمان عدالت سے ضمانتوں پر ہیں  ایک مین ملزم کینڈا مفرور ہو گیا ایک اور ملزم عبوری ضمانت پر زیر تفیتش ہے دھمکیوں پر مصطفی میرانی اور دیگر کے خلاف الگ مقدمہ درج کیا گیا دھمکیوں کے مقدمے میں بھی ملزمان ضمانت کرا چکے۔

احتجاج

مزید :

ملتان صفحہ آخر -