ایفل ٹاور سے شادی، لوگوں کے طعنوں سے تنگ آکر امریکی خاتون نے اپنا جنسی رجحان واضح کردیا

 ایفل ٹاور سے شادی، لوگوں کے طعنوں سے تنگ آکر امریکی خاتون نے اپنا جنسی رجحان ...
 ایفل ٹاور سے شادی، لوگوں کے طعنوں سے تنگ آکر امریکی خاتون نے اپنا جنسی رجحان واضح کردیا

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) فرانس کے ایفل ٹاور سے شادی کرنے والی امریکی خاتون ایریکا لیبری نے دنیا کے طعنوں سے تنگ آ کر بالآخر اپنے جنسی رجحان کے متعلق لوگوں کووضاحت کر دی ہے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق ایریکا لیبری نے کہا ہے کہ ”لوگوں میں کئی طرح کے جنسی رجحانات پائے جاتے ہیں، جن میں سے ایک بے جان اشیاءمیں جنسی رغبت رکھنے کا رجحان بھی ہے جسے’ آبجیکٹم سیکشوئل‘ (Objectum Sexual)کہا جاتا ہے۔ میں بھی یہی رجحان رکھنے والی ایک خاتون ہوں۔“

ایریکا نے بتایا کہ ایفل ٹاور سے شادی کرنے سے قبل وہ لوہے اور لکڑی سے بنی کئی دیگر اشیاءکی محبت میں مبتلا رہ چکی ہے۔ اس کا کہنا تھا کہ بچپن میں اسے اس کے سوتیلے بھائی نے جنسی زیادتی کا نشانہ بناڈالا تھا جس کی وجہ سے اس میں مردم بیزاری کے جذبات غالب آ گئے اور وہ مردوں کی بجائے بے جان چیزوں میں جنسی تسکین محسوس کرنے لگی۔ 

ایریکا کا کہنا تھا کہ ”جو لوگ مجھے میرے جنسی رجحان کی وجہ سے طعن و تشنیع کا نشانہ بناتے ہیں انہیں یہ بات سمجھنی چاہیے کہ ذہنی بیماری کے علاوہ جنسی استحصال بھی لوگوں کو آبجیکٹم سیکشوئل نامی عارضے میں مبتلا کر سکتا ہے، جیسا کہ میرے کیس میں ہوا۔“واضح رہے کہ امریکی شہر سین فرانسسکو کی رہائشی 42سالہ ایریکا نے 2007ءمیں ایفل ٹاور کے ساتھ 10سال کے لیے شادی کی تھی چنانچہ 2018ءمیں ان کی خودبخود طلاق ہو گئی۔ ایرکا نے ایفل ٹاور سے شادی کے لیے ایک باقاعدہ تقریب کا انعقاد کیا تھا جس میں درجنوں مہمان شامل ہوئے تھے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -