میاں مشتاق کے قتل کا مقدمہ صوبائی حکومت اور دہشت گردوں کے خلاف درج کیا جائے: افتخار حسین

میاں مشتاق کے قتل کا مقدمہ صوبائی حکومت اور دہشت گردوں کے خلاف درج کیا جائے: ...
میاں مشتاق کے قتل کا مقدمہ صوبائی حکومت اور دہشت گردوں کے خلاف درج کیا جائے: افتخار حسین

پشاور (مانیٹرنگ ڈیسک) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی رہنماءاور سابق وزیر اطلاعات میاں افتخار حسین نے کہا ہے کہ میاں مشتاق کے قتل کا مقدمہ خیبرپختونخواہ حکومت اور دہشت گردوں کے خلاف درج کیا جائے ، مرکزی حکومت اور اپوزیشن دونوں موجودہ صورتحال کی ذمہ دار ہیں۔ بڈھ بیر میں قتل ہونے والے اے این پی کے صوبائی رہنماءمیاں مشتاق کی یاد میں منعقدہ تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے میاں افتخار حسین نے کہا کہ موجودہ حکومت دہشت گردوں کو اپنا محسن سمجھتی ہے، وفاقی وزیر داخلہ نے حکیم اللہ محسود کی موت پر گھنٹوں آنسو بہائے لیکن ہنگو میں شہید ہونے والے طالب علم اعتزاز حسن کی شہادت پر ایک لفظ نہیں کہا۔ اس موقع پر اے این پی کے عبوری صدر سینیٹر حاجی عدیل نے بھی مرکزی وصوبائی حکومتوں کو شدیدتنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ مرکز میں کنفیوز اور صوبے میں بزدل حکومت ہے۔ حاجی عدیل کا کہنا تھا کہ خیبرپختونخوا میں کارکنوں کی ٹارگٹ کلنگ کے حوالے سے تھنک ٹینک کا اجلاس بلایا ہے۔

مزید : پشاور

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...