برطانوی شہر میں پانی سے مسلسل لاشیں دریافت، لوگوں میں خوف و ہراس

برطانوی شہر میں پانی سے مسلسل لاشیں دریافت، لوگوں میں خوف و ہراس
برطانوی شہر میں پانی سے مسلسل لاشیں دریافت، لوگوں میں خوف و ہراس

  

مانچسٹر (نیوزڈیسک) برطانوی شہر مانچسٹر کے رہائشی اس وقت شدید خوف میں مبتلا ہیں جس کی وجہ شہر کی نہروں سے لاشوں کا نکلنا ہے۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ چھ سالوں میں شہر کی نہروں سے 60 لاشیں برآمد ہو چکی ہیں۔ برمنگھم سٹی یونیورسٹی کے پروفیسر کریگ جیکسن کا کہنا ہے کہ یہ ایک غیر معمولی بات ہے اور ممکن ہے کہ کوئی قاتل یہ کام کر رہا ہے۔

دنیا کی تاریخ میں 50 ارب روپے کی چوری جس کا آج تک سراغ نہ ملا

قابل ذکر امر یہ ہے کہ زیادہ تر لاشیں شہر کے اس حصے کے قریب نکل رہی ہیں جہاں ہم جنس پرستوں کے کلبز ہیں۔ پروفیسر جیکسن کا کہنا ہے کہ یہ انتہائی عجیب بات ہے اور یہ بات ماننے میں نہیں آتی کہ ان لوگوں نے خودکشی کی یا وہ کوئی حادثے کا شکار ہوئے۔ اس کا مزید کہنا تھا کہ نہر خودکشی کیلئے کوئی اچھا طریقہ نہیں لیکن قاتلوں کیلئے یہ کافی اچھی ہوتی ہیں کیونکہ اس طرح جرم کا سراغ مٹانے میں آسانی رہتی ہے۔ تاہم شہر کی پولیس نے کسی بھی خطرناک قاتل کی موجودگی کی تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام واقعات کی الگ الگ تحقیق کی جا رہی ہے اور جلد اس معمے کو حل کر لیا جائے گا۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -