سوئی گیس افسران کے میٹر ریڈروں سے مذاکرات ناکام، تیسرے روز بھی دھرنارہا

سوئی گیس افسران کے میٹر ریڈروں سے مذاکرات ناکام، تیسرے روز بھی دھرنارہا

  

لاہور(خبرنگا) سوئی گیس کمپنی کے عارضی میٹر ریڈروں نے ایم ڈی سوئی گیس کمپنی کے دفتر کے سامنے ڈے اینڈ نائٹ احتجاجی دھرنے کا سلسلہ تیسرے روز بھی جاری رکھا ہے اس موقع پر سوئی گیس کے ملازمین اپنے ہی افسران کے خلاف سراپااحتجاج بنے رہے ہیں۔ اس موقع پر گیس کمپنی کے افسران نے میٹر ریڈرز ایکشن کمیٹی کے مرکزی چیئرمین فیصل شہزاد ، مرکزی وائس چیئرمین محمد علی، شیراز گیلانی اور شاہد یوسف سے مذاکرات کر کے احتجاج ختم کرنے پر زور دیا لیکن احتجاجی ملازمین نے مطالبات کی منظوری تک دھرنا ختم کرنے سے انکار کر دیا۔ دوسری جانب میٹر ریڈروں کی ہڑتال کے باعث لاہور سمیت پنجا ب بھر میں گیس کے میٹروں کی ریڈنگ کا کام جزوی طور پر معطل رہا ہے جبکہ میٹر ریڈروں کی ہڑتال کے حوالے سے گیس حکام کا کہنا ہے کہ عارضی میٹر ریڈروں کی تعداد 700 کے قریب اور ان کی ملازمتوں کو کنفرم کرنا حکومتی مسئلہ ہے۔ اس میں صرف وزیر اعظم پاکستان ہی ملازمتوں پر کنفرم کر سکتے ہیں۔ گیس کمپنی کے پاس اس حوالے سے اختیارات نہ ہیں جبکہ احتجاجی ملازمین نے اعلان کیا ہے کہ مطالبات کی منظوری تک ڈے اینڈ نائٹ احتجاجی دھرنے کا سلسلہ جاری رکھا جائے گا۔

مزید :

صفحہ آخر -