ٹیکس کی خورد برد کے مقدمہ میں ملوث پینٹ فیکٹری مالک کی عبوری ضمانت

ٹیکس کی خورد برد کے مقدمہ میں ملوث پینٹ فیکٹری مالک کی عبوری ضمانت

لاہور(نامہ نگار خصوصی )سپریم کورٹ نے 42کروڑ 91لاکھ روپے کے سیلز ٹیکس کی خورد برد کے مقدمہ میں ملوث پینٹ فیکٹری مالک کی عبوری ضمانت منظور کر لی، مسٹرجسٹس شیخ عظمت سعید کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے سکا پینٹ انڈسٹریز کے مالک محمد محمد آصف کی عبوری ضمانت کی درخواست پر سماعت کی، ملزم کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ ایف بی آر نے درخواست گزار کے خلاف 42کروڑ 91لاکھ روپے کے سیلز ٹیکس فراڈ کا مقدمہ درج کروایا ہے جبکہ درخواست گزار کی کمپنی باقاعدگی سے ہر سال سیلز ٹیکس ادا کرتی ہے، انہوں نے مزید مؤقف اختیار کیا کہ ایف بی آر کو ہر سال کی الگ الگ انکم ٹیکس ریٹرن بھی جمع کرائی گئی ہے مگر اس کے باوجود ایف بی آر نے غلط تخمینہ لگا کر مقدمہ درج کروا دیا، انہوں نے استدعا کی کہ سیلز ٹیکس کے تخمینے کا تنازع فائنل ہونے تک عبوری ضمانت منظور کی جائے، ابتدائی سماعت کے بعد سپریم کورٹ نے ایف بی آر کو ملزم آصف کی گرفتاری سے روکتے ہوئے پانچ لاکھ روپے کے مچلکوں کے عوض عبوری ضمانت کی درخواست منظور کر لی۔

مزید : علاقائی


loading...