گوجرانوالہ،چوری کے شبہ میں زیر تفتیش سیاسی شخصیت کا ڈرائیورپولیس تشدد سے ہلاک

گوجرانوالہ،چوری کے شبہ میں زیر تفتیش سیاسی شخصیت کا ڈرائیورپولیس تشدد سے ...

گوجرانوالہ(بیورورپورٹ)گوجرانوالہ پولیس کے مبینہ تشدد سے حوالات میں بند45 سالہ شخص ہلاک‘،مقتول سابق ایم پی اے اور پی ٹی آئی کے ٹکٹ ہولڈرکے بیٹے کے گھر میں سولہ سال سے ملازم تھا‘لواحقین تھانہ کینٹ پولیس کی حوالات میں چوری کے شبہ میں بند45 سالہ لیاقت مسیح پولیس کے مبینہ وحشیانہ تشدد سے جاں بحق ہو گیا ،مقتول کے لواحقین کا کہنا ہے کہ لیاقت مسیحی گذشتہ سولہ سال سے سابق ایم پی اے اور پی ٹی آئی کے ٹکٹ ہولڈر ایس اے حمید کے بیٹے رضا حمید کے گھر ڈرائیور تھا، اور دو ماہ قبل ان کے گھر میں لاکھوں روپے نقدی اور زیوارات چوری ہو گئے تھے جسکے شبہ میں پولیس نے لیاقت مسیحی کو حراست میں لے رکھا تھا، دو روزقبل پولیس نے لیاقت مسیحی کو سنٹرل جیل سے تھانہ کینٹ منتقل کیا گیا جہاں پر پولیس نے مقتول کو وحشیانہ تشددکا نشانہ بنایا جس سے لیاقت مسیحی ہلاک ہو گیا ،دوسری طرف تھانہ کینٹ پولیس نے مقتول کے لواحقین کو اطلاع کئے بغیر لیاقت مسیح کی نعش کوڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال منتقل کردیا ،جہاں ان کے پہنچنے سے پہلے ہی نعش کا پوسٹ مارٹم ہو چکا تھا۔مقتول 4بچوں کا باپ تھایاد رہے کہ مقتول کا بیٹاخرم ولد لیاقت مسیح بھی ڈکیتی کے شبہ میں پولیس کی حراست میں ہے۔

وحشیانہ تشدد

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر