ملک میں د اعش کے وجود سے انکار کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے:ندیم نصرت

ملک میں د اعش کے وجود سے انکار کرنے والوں کو شرم آنی چاہیے:ندیم نصرت

لندن( پ ر)متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی کے قائم مقام کنوینرندیم نصرت نے کہاہے کہ کراچی، اسلام آباداورملک کے مختلف شہروں میں داعش کی بڑھتی ہوئی کھلے عام کارروائیوں اوران کارروائیوں کے اعلانیہ اعتراف کے بعد پاکستان میں داعش کے وجودسے انکارکرنے والوں کو شرم سے ڈوب مرنا چاہیے ۔اپنے ایک بیان میں ندیم نصرت نے کہاکہ قائد تحریک پاکستان کے واحدرہنماہیں جنہوں نے ہمیشہ قوم کوآنے والے خطرات سے وقت سے پہلے آگاہ کیا، قائدتحریکنے کئی سال قبل قوم کوآگاہ کیاکہ ملک کے سب سے بڑے شہرکراچی میں طالبانائزیشن ہورہی ہے، طالبان شہرکے مختلف علاقوں میں اپنے ٹھکانے قائم کررہے ہیں لیکن اس وقت کی حکومت کے وزراء اورمخالف سیاسی ومذہبی رہنماؤں نے نہ صرف اس سے انکارکیابلکہ قائدتحریک کامذاق اڑایااور انہیں طرح طرح کے طعنے دیے۔قائدتحریک نے ڈیڑھ سال قبل باقاعدہ پریس کانفرنس کرکے قوم کوآگاہ کیاکہ پاکستان میں داعش آگئی ہے، داعش کے لوگ دہشت گردی کے لئے بھرتیاں کررہے ہیں اورلوگوں کواپنے ساتھ ملارہے ہیں،اس سے نمٹنے کیلئے فوری طورپراقدامات کئے جائیں لیکن حقائق سے انکارکی روش پرچلنے والے موجودہ حکمرانوں نے پاکستان میں داعش کے وجود سے صاف انکارکیا، سیاسی ومذہبی رہنماؤں نے بھی داعش کی کارروائیوں کو نہیں مانا بلکہ الٹاقائدتحریک کوہی الزامات کانشانہ بنایا۔ آج جب داعش نے پورے ملک میں دہشت گردی کی کارروائیاں شروع کردی ہیں اور گزشتہ روزاسلام آبادمیں بھی ا ے آروائی کے دفترپربم سے حملہ کیاہے اور اس کی ذمہ داری بھی قبول کی ہے تو بعض رہنما داعش کی کارروائیوں کوتسلیم کرنے پرمجبورہوگئے ہیں اورخودیہ کہہ رہے ہیں کہ داعش نے اسلام آبادمیں پنجے گاڑ لئے ہیں۔ ندیم نصرت نے کہاکہ ہم اپنے قائد الطاف حسین کوان کی بصیرت ،دوراندیشی اورسچائی پر آج ایک بار پھرخراج تحسین پیش کرتے ہیں کہ ان کی بتائی ہوئی باتیں آج پھردرست ثابت ہورہی ہیں۔ندیم نصرت نے کہاکہ اگرآج بھی حکمرانوں نے شترمرغ کی طرح ریت میں سردبائے رکھنے کی پالیسی جاری رکھی اور حالت انکارسے باہرنہ نکلے تومذہبی انتہاپسند عناصر پاکستان کوتباہ کردیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ آخر


loading...