بجلی کا طویل کریک ڈاﺅن ،ہائی کورٹ میں مقدمات کی سماعت متاثر

بجلی کا طویل کریک ڈاﺅن ،ہائی کورٹ میں مقدمات کی سماعت متاثر
بجلی کا طویل کریک ڈاﺅن ،ہائی کورٹ میں مقدمات کی سماعت متاثر

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہور ہائیکورٹ میں 64 سیاست دانوں اور معروف شخصیات کے بیرون ملک اثاثے واپس لانے اور ان سے بیان حلفی طلب کرنے کی درخواست پرسماعت بغیر کاروائی کے ملتوی ہوگئی ۔جسٹس خالد محمود خان نے کیس کی سماعت کرنا تھی تاہم بجلی کے بریک ڈاﺅن اوروکلاءکے یوم تشکر کے باعث فوری نوعیت کے مقدمات کی سماعت کی جا سکی۔بجلی کے بریک ڈاﺅن کے باعث متعدد دیگرمقدمات کی سماعت بھی متاثر ہوئی ۔ درخواست گزار بیرسٹر جاوید اقبال جعفری نے موقف اختیار کر رکھا ہے کہ میاں نواز شریف ،آصف علی زرداری ،عمران خان اور چودھری شجاعت حسین سمیت 64سیاست دانوں اور معروف شخصیات نے 400 ارب ڈالر غیر قانونی طور پر بیرون ملک منتقل کئے اور قومی خزانے کو ناقابل تلافی نقصان پہنچایا جبکہ ایک اہم شخصیت کے صاحبزادوں نے برطانیہ میں ایک سو انچاس جائیدادیں خریدیں جبکہ درخواست میں فریق بنائے گئے تمام سیاستدانوں نے بیرون ملک اثاثے بنا کر ملک کو کنگال کیا۔ درخواست میں بنائے گئے فریقین بیرون ملک دولت کی منتقلی سے انکاری ہیں لہذا ان سے دولت بیرون ملک منتقل نہ کرنے کے حوالے سے بیان حلفی طلب کیا جائے۔عدالت نے کیس کی مزید کارروائی 3 فروری تک ملتوی کر دی۔

مزید : لاہور