وزیراعظم کی آسٹریلیاکو جنگلات میں لگی آگ بجھانے میں مدد کی پیشکش

وزیراعظم کی آسٹریلیاکو جنگلات میں لگی آگ بجھانے میں مدد کی پیشکش

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وزیراعظم عمران خان نے آسٹریلوی حکومت کو خط لکھ کرجنگلات میں لگی خوفناک آگ بجھانے کیلئے مدد کی پیشکش کردی۔وزیراعظم آفس کی جانب سے عمران خان کا آسٹریلوی وزیراعظم اسکاٹ موریسن کو لکھا گیا خط بھی جاری کیا گیا۔اپنے خط میں وزیراعظم عمران خان نے گزشتہ کئی ماہ سے آسٹریلیا کے جنگلا ت میں لگی آگ کے باعث ہونیوالے جانی و مالی نقصان پر گہرے غم اور دکھ کا اظہار کیا اور کہا پاکستانی عوام اور حکومت کی ہمدردیاں اور دعائیں آسٹریلوی عوام کیساتھ ہیں۔عمران خان کا کہنا ہے انہیں امید ہے  آ سٹریلوی عوام اس آفت اور مشکل پر بھرپور قوت اور ہمت سے قابو پالیں گے۔وہ متعدد بار یہ بات کہہ چکے ہیں کہ موسمیاتی تبدیلیاں موجودہ دور کا سب سے بڑا اور اہم مسئلہ ہیں اور اس چیلنج سے کوئی بھی ملک تن تہا نہیں نمٹ سکتا۔ انہیں امید ہے یہ بحران اس بات کا موقع فراہم کر یگا کہ موسمیاتی تبدیلی کے مسائل پر تمام عالمی ادارے کوئی مشترکہ حل نکالیں۔اپنے خط میں وزیراعظم نے مزیدکہا باہمی دوستانہ تعلقات، گہرے اور تاریخی روابط کے پیش نظر وہ اس مسئلے میں کسی بھی ممکنہ مدد کیلئے تیار ہیں۔خیال رہے آسٹریلیا کے جنگلات میں دسمبر 2019 سے لگنے والی آگ پر تاحال قابو نہیں پایا جاسکا ہے۔اس خوفناک آگ کے نتیجے میں اب تک 27 افراد کی ہلاکتوں کی تصدیق ہوچکی ہے جبکہ کروڑوں جانور ہلاک اور بڑے پیمانے پر زرعی اراضی بھی متاثر ہوئی ہے۔سڈنی یونیوسٹی کے ماہرین کے مطابق آگ کے باعث ہلاک یا زخمی ہونیوالے جانوروں کی تعداد ایک ارب تک ہے۔ماہرین کا خیال ہے جانوروں کی متعدد انواع اس آگ کے باعث صفحہ ہستی سے مٹ گئی ہیں۔آگ بجھانے میں ناکامی کے بعد وزیراعظم اسکاٹ موریسن پر شدید تنقید کی جارہی ہے اور ان سے مستعفی ہونے کا بھی مطالبہ کیا جارہا ہے۔اپوزیشن جماعتوں نے وزیراعظم پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے وہ موسمیاتی تبدیلیوں پر بہتر اور مناسب پالیسیاں لانے میں ناکام رہے ہیں۔

وزیراعظم پیشکش

مزید : صفحہ اول