کیسے یقین کر لیں ادویات کی قیمتوں میں اضافہ ہوا،ہم مفروضوں پر کارروائی نہیں کرسکتے: جسٹس محمد امیر بھٹی

کیسے یقین کر لیں ادویات کی قیمتوں میں اضافہ ہوا،ہم مفروضوں پر کارروائی نہیں ...

  



لاہور (نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے قرار دیا ہے کہ ہم مفروضوں پر کارروائی نہیں کر سکتے۔مسٹر جسٹس محمد امیر بھٹی نے یہ ریمارکس فارماسوٹیکل کمپنیز کی جانب سے ادویات کی قیمتوں میں اضافہ اور اوور چارجنگ کے خلاف مقامی وکیل ندیم سرور کی درخواست کی سماعت کے دوران دیئے، فاضل جج نے درخواستگزار کو ادویات کی پرائس لسٹ درخواست کے لگانے کی ہدایت کر تے ہوئے کہا کہ ہم کیسے یقین کر لیں کہ قیمتوں میں اضافہ ہواہے،اوور چارجنگ کے خلاف کارروائی کرنا حکومتی اداروں کا کام ہے۔ درخواست گزار کا موقف ہے کہ فارماسوٹیکل کمپنیز نے حکومت کی منظوری کے بغیر ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا ہے۔90 فیصد سے زائد ادویات کی قیمتوں میں 200 فیصد تک کا اضافہ کیاگیا ہے۔حکومت قیمتیں بڑھانے والی فارماسوٹیکل کمپنیز کے خلاف ایکشن نہیں لے رہی۔عوام کو سستی ادویات کی فراہمی حکومت کی ذمہ داری اور عوام کا بنیادی حق ہے۔نیب کو ادویات کی قیمتوں میں اضافہ کرنے والی فارماسوٹیکل کمپنیز کے خلاف تحقیقات کا حکم دیا جائے۔درخواست میں ادویات کے بڑھائی گئی قیمتوں کوکالعدم کرنے کی استدعا بھی کی گئی ہے۔

 ادویات کی قیمتیں 

مزید : صفحہ آخر


loading...