حوثی اپنے مضبوط گڑھ سے پسپا، لڑائی میں پانچ کمانڈرو ں سمیت 29ہلاک 

حوثی اپنے مضبوط گڑھ سے پسپا، لڑائی میں پانچ کمانڈرو ں سمیت 29ہلاک 

  



صنعاء (این این آئی)یمن کی آئینی فوج نے ایرانی حمایت یافتہ حوثی باغیوں کو ان کے مضبوط گڑھ صعدہ گورنری میں اہم علاقے سے پسپا کردیا ہے۔آئینی فوج نے آل ثابت میں الربع ٹیلے، آل ثابت مارکیٹ کے بالمقابل وادی جلال اور دیگر اہم مقامات پراپنا کنٹرول مضبوط کرلیا،لڑائی کے دوران 21  حوثی باغی ہلاک اور29 زخمی ہوئے جبکہ پانچ سرکردہ حوثی کمانڈاور ابو علی نامی فیلڈ کمانڈر بھی ہلاک ہوگئے۔ زندہ بچ جانے والے باغی اسلحہ چھوڑ کر فرا ہوگئے۔آئینی فوج نے باغیوں سے چھینا گیا اسلحہ اور گولہ بارود قبضے میں لے لیا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق یمن کی آئینی حکومت نے گذشتہ روز شمالی گورنری صعدہ میں قطابر ڈاریکٹوریٹ میں آل ثبات کے مقام پر کارروائی کرتے ہوئے باغیوں کو وہاں سے پسپا کردیا اور علاقے کو اپنے کنٹرول میں لے لیا۔یمنی فوج کے شاہین بریگیڈ کے کمانڈر بریگیڈیئر احمد الطریفی نے بتایا کہ آئینی فوج نے آل ثابت میں الربع ٹیلے، آل ثابت مارکیٹ کے بالمقابل وادی جلال اور دیگر اہم مقامات پراپنا کنٹرول مضبوط کرلیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ لڑائی کے دوران 21  حوثی باغی ہلاک اور29 زخمی ہوئے۔بریگیڈیئر الطریفی کا کہنا تھا کہ حوثی ملیشیا اور آئینی فوج کے درمیان جاری لڑائی کے دوران مختلف اقسام کے اسلحہ کا استعمال کیا گیا جس کے نتیجے میں پانچ سرکردہ حوثی کمانڈاور ابو علی نامی فیلڈ کمانڈر بھی ہلاک ہوگئے۔ زندہ بچ جانے والے باغی اسلحہ چھوڑ کر فرا ہوئے۔ آئینی فوج نے باغیوں سے چھینا گیا اسلحہ اور گولہ بارود قبضے میں لے لیا ہے۔یمنی فوجی عہدیدار کا کہناتھا کہ آل ثابت اور اطراف میں باغیوں کے خلاف لڑائی کا سلسلہ جاری ہے اور فوج جلد ہی دیگر علاقوں سے بھی حوثی ملیشیا کو نکال باہر کرے گی۔

مزید : عالمی منظر


loading...