ایک ایسے ادارے نے 4 روزہ ٹیسٹ کی تجویز مسترد کر دی کہ آئی سی سی بھی حیران پریشان رہ جائے

ایک ایسے ادارے نے 4 روزہ ٹیسٹ کی تجویز مسترد کر دی کہ آئی سی سی بھی حیران ...
ایک ایسے ادارے نے 4 روزہ ٹیسٹ کی تجویز مسترد کر دی کہ آئی سی سی بھی حیران پریشان رہ جائے

  



لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن) کرکٹ قوانین کے سرپرست میریلیبون کرکٹ کلب (ایم سی سی) نے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جانب سے 4 روزہ ٹیسٹ میچ کی تجویز کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ سینئر طرز کو 5 روزہ فارمیٹ میں ہی کھیلتے رہنا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق آئی سی سی کی جانب سے 2023ءسے شروع ہونے والے اگلے دوارنئے میں 4 روزہ ٹیسٹ کو لازمی قرار دینے کی تجویز سامنے آئی ہے اور اس حوالے سے مارچ میں کرکٹ کمیٹی جائزہ لے گی تاہم دنیا بھر کے موجودہ اور سابق کرکٹرز سینئر فارمیٹ کے میچ کو مختصر کرنے کی مخالفت کرچکے ہیں اور اب کرکٹ قوانین کے سرپرست کلب ایم سی سی نے بھی اس تجویز کو مکمل طور پر مسترد کردیا ہے۔

اعلامیہ میں کہا گیاکہ ہم نے ٹیسٹ کرکٹ کے مستقبل کے حوالے سے حالیہ کچھ عرصے میں جاری بحث کا نوٹس لیا ہے اور ہم آئی سی سی کی 2023ءسے ٹیسٹ چیمپئن شپ میں موجودہ 5 کے بجائے 4 روزہ میچ شامل کرنے کی خواہش سے بھی آگاہ ہیں، حال ہی میں ایم سی سی کرکٹ کمیٹی اورورلڈ کرکٹ کمیٹی نے بھی اس ایشو کا جائزہ لیا اور اگرچہ انہیں 4 روزہ ٹیسٹ کے کچھ فوائد بھی دکھائی دئیے مگر دونوں کمیٹیز اس بات پر یقین رکھتی ہیں کہ ٹیسٹ کرکٹ کو موجودہ 5 روزہ فارمیٹ میں ہی آگے بڑھنا چاہیے۔

مزید : کھیل