چلڈرن کمپلیکس کیلئے چار وارڈز سی پی ایس پی سے منظور

چلڈرن کمپلیکس کیلئے چار وارڈز سی پی ایس پی سے منظور

  

ملتان (خصو صی  رپورٹر)چلڈرن کمپلیکس شعبہ ایمرجنسی اور آوٹ ڈور نیو 4 منزلہ عمارت کی تعمیر کیلئے اے ڈی پی سکیم آخری مراحل میں، محکمہ بلڈنگ نے نیو بلڈنگ کی تعمیر کیلئے بنیادی کام شروع کردیا۔گزشتہ سال چلڈرن ہسپتال کیلئے چار وارڈ سی پی ایس پی سے منظور کرالیے گئے مستقبل میں ان وارڈز کئے گورنمنٹ نیو کنسلٹنٹ کی تعیناتی یقینی بنائے گی ان خیالات(بقیہ نمبر26صفحہ6پر)

 کا اظہارچلڈرن کمپلیکس کے ڈین پروفیسر کاشف چشتی نے ”پاکستان“ سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے چلڈرن کمپلیکس میں نئی شروع ہونے والی سکیموں،گزشتہ سال میں حاصل کردہ مقاصد بارے مزید بتایا کہ شعبہ پیڈز میڈیسن کے چار واردز کو سی پی ایس پی سے منظور کرایا گیا ہے اور پی ایم سی کی فیس ادا کرکے نئے ڈاکٹرز کی ٹریننگ کیلئے recignise کرالیا گیا ہے اور تمام ڈاکٹرز کے سرٹیفکیٹ پی ایم سی سے ویری فائیڈ کردیے جائیں گے نئے وارڈز کیلئے گورنمنٹ کنسلٹنٹ بھی مہیا کرے گی۔پروفیسر کاشف چشتی نے کہا کہ چلڈرن ہسپتال 320 بیڈز کا مکمل ہسپتال ہے ہم نے اپنی کوششوں سے مختلف وارڈز میں گنجائش پیدا کرکے 526بیڈز لگائے گئے ہیں اور ان ایکسڑا بیڈز پر بھی بچوں کو فری علاج معالجہ کی تمام سہولیات مہیا کی جاریی ہیں شعبہ ایمرجنسی  اور آوٹ ڈور میں مریض بچوں کو مکمل فری ادویات مہیا کی جاریی ہیں اسکیے لئے کمشنر ملتان اور سیکرٹری محکمہ سپیشلائزڈ ساوتھ پنجاب کی موجودہ اتھارٹی مریضوں کو سرکاری ہسپتالوں میں علاج کی سہولیات مہیا کرنے کیلئے ذاتی دلچسپی لے رہی ہے۔رواں سال شعبہ ایمرجنسی اور آوٹ ڈور کے توسیعی منصوبہ میں پیش رفت کی جارہی ہے اور نیو چار منزلہ عمارت کی تعمیر کیلئے  اے ڈی پی مکمل کی جارہی ہے جس کیلئے ہسپتال میں فیملی پلاننگ بلڈنگ  اور ملحقہ جگہ پر نیو ایمرجنسی،آوٹ ڈوراور ایمرجنسی تھیٹرز کیلئے چار منزلہ بلڈنگ تعمیر کی جائیگی محکمہ بلڈنگ نے اس پر بنیادی لیول کا کام شروع کردیا ہے

کاشف چشتی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -