افغان و کشمیر ی شہریوں پر مشتمل 8رکنی گروہ گرفتار، نشہ آور گولیاں برآمد

افغان و کشمیر ی شہریوں پر مشتمل 8رکنی گروہ گرفتار، نشہ آور گولیاں برآمد

  

       پشاور (کرائم رپورٹر)پشاور پولیس نے افغانستان و کشمیری شہریوں پر مشتمل آٹھ رکنی گروہ کا سراغ لگا کر کروڑوں روپے مالیت کے نشہ آور گولیاں برآمد کر لیں، گروہ میں بٹ خیلہ ملاکنڈ اور ضلع خیبر سے تعلق رکھنے والے افراد بھی شامل ہیں جو نشہ آور گولیوں سمیت چرس، افیون کے سملنگ میں بھی ملوث ہیں، ملزمان گزشتہ روز تین گاڑیوں میں نشہ آور گولیاں اور منشیات سمگل کرنے کی کوشش کر رہے تھے جن کو خفیہ اطلاع ملنے پر ناکام بنا دیا گیا ہے، تمام ملزمان نے ابتدائی تفتیش کے دوران آزاد کشمیر، سوات، ہزارہ ڈویژن اور جنوبی پنجاب کو بھی منشیات اور نشہ آور گولیاں سمگل کرنے کا اعتراف کر لیا ہے جن کے قبضہ سے 9 ہزار سے زائد نشے کی گولیاں، 27 کلو گرام چرس اور ہزاروں روپے مالیت کی افیون بھی برآمد کر لی گئی ہے، ملزمان کی نشاندہی پر پنجاب اور آزاد کشمیر میں سرگرم پورے نیٹ ورک کا سراغ لگا لیا گیا ہے جس سے متعلقہ پولیس حکام کو آگاہ کر دیا گیا ہے، تمام ملزمان کے خلاف مقدمات درج کر کے ان سے مختلف زاویوں پر تفتیش کا آغاز کر دیا گیا ہیتفصیلات کے مطابق گزشتہ روز تھانہ چمکنی پولیس کو خفیہ اطلاع ملی تھی کہ نشہ آور گولیاں اور دیگر منشیات سمگلر گروہ کسی بھی وقت بھاری مقدار میں منشیات سمگل کرنے کی کوشش کریں گے جس پر ایس ایچ او تھانہ چمکنی ہارون جدون کی سربراہی میں خصوصی ٹیم نے موٹر وے ناکہ بندی کے دوران تین گاڑیوں کی تلاشی لینے پر 27 کلو گرام اعلی کوالٹی چرس اور ہزاروں روپے مالیت کی افیون برآمد کر کے کشمیری، افغانی اور بٹ خیلہ ملاکنڈ سے تعلق رکھنے والے ملزمان اسد اختر، کامران، زاہد، خیال محمد، شاہ وزیر، سکندر حیات، زاہد خان کو گرفتار کر لیا، جنہوں نے ابتدائی تفتیش کے دوران آزاد کشمیر، ہزارہ ڈویژن، سوات اور پنجاب کے مختلف اضلاع کو منشیات اور نشہ آور گولیاں سمگل کرنے کا انکشاف کیا جن کی نشاندہی پر چغلپورہ میں واقع رہائشی مکان 9 ہزار سے زائد نشہ آور گولیاں برآمد کر کے ملزم قاری امام الدین ولد عالم خان کو بھی گرفتار کر لیا ہے جس کا تعلق ہمسایہ ملک افغانستان سے ہے، برآمد نشہ آور گولیوں اور منشیات کی مالیت کروڑوں روپے بنتی ہے، 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -