جنگلی حیات کے پکوان بنانے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن تیز

جنگلی حیات کے پکوان بنانے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن تیز

  

  لاہور (لیڈی رپورٹر)   وزیر جنگلی حیات وماہی پروری پنجاب سید صمصام علی بخاری و سیکرٹری جنگلات،جنگلی حیات وماہی پروری پنجاب شاہد زمان کی خصوصی ہدایت پر ڈائریکٹر جنرل ملک ثناء  اللہ خان کی زیر قیادت محکمہ نے صوبہ بھر میں جنگلی حیات کے گوشت کے پکوان آفر کرنیوالے ہوٹلوں اور ریستورانوں کیخلاف کریک ڈاؤن تیز کردیا ہے اور صوبہ کے طول وعرض میں ہوٹلوں اور بڑے چھوٹے ریستورانوں پر اچانکبھرپورچھاپے مارے جارہے ہیں۔

 تفصیل کے مطابق ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈلائف ملتان ریجن محمد حسین گشکوری کی سربراہی میں قادر پورراواں ملتان سے لاہور روڈ پرواقع ایک نجی ہوٹل میں اچانک چھاپے کے دوران مرغابیوں کا گوشت کثیر مقدار میں برآمد کرکے ہوٹل پرو پرائیٹرکا وائلڈلائف ایکٹ کی خلاف ورزی پر چالان مرتب کیا اور کیس کمپاؤنڈ کرنے کی درخواست پر مبلغ 35ہزار روپے جرمانہ کیا۔ملتان ریجن ہی میں ایک دیگر کامیاب کارروائی کے دوران وائلڈلائف ٹیم مظفر گڑھ نے ہیڈ تونسہ کے بیلہ جات میں کتوں کیساتھ پاڑہ ہرن کے شکار میں ملوث 2افراد کا تعاقب کیا جو فوری موقع سے فرار ہوگئے تاہم ذبح شدہ پاڑہ ہرن جائے وقوعہ سے برآمد کرلیا گیا۔ملزمان کیخلاف قانونی کارروائی کی جارہی ہے جبکہ برآمد شدہ گوشت چالان سمیت علاقہ مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا گیا۔ عدالت نے گوشت نیلام کرنے کاحکم صادر فرمایا جسے مبلغ 45ہزار روپے میں نیلام کردیاگیا۔ مزید برآں ڈپٹی ڈائریکٹر وائلڈلائف راولپنڈی ریجن راجہ محمد احسان کی سربراہی میں وائلڈلائف سٹاف نے کامیاب کارروائی کے نتیجے میں تیتر کے غیر قانونی شکار میں ملوث 2افراد کو گرفتار کرلیا اور کیس کمپاؤنڈ کرنے کی درخواست پر انہیں 45ہزارروپے جرمانہ کی۔۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -