جے یو پی نے سانحہ مری میں شہید ہونے والوں کیلئے ”یوم دعامنایا

  جے یو پی نے سانحہ مری میں شہید ہونے والوں کیلئے ”یوم دعامنایا

  

لاہور(پ ر)جمعیت علماء پاکستان کے زیر اہتمام جمعتہ المبارک پر سانحہ مری میں شہید ہونے والوں کیلئے ”یوم دعا“ منایا گیا۔جمعیت علماء پاکستان اور ملی یکجہتی کونسل کے صدر ڈاکٹر ابوالخیر محمد زبیر،مفکر اسلام علامہ قاری محمد زوار بہادر،سیدمحمد صفدر شاہ گیلانی،پروفیسر ڈاکٹر جاوید اعوان،حافظ نصیر احمد نورانی،مفتی تصدق حسین،رشید احمد رضوی،مولانا محمد سلیم اعوان،علامہ ابویاسر اظہر حسین فاروقی،علامہ غلام مصطفےٰ سلطانی،محمد ایوب مغل،مفتی جمیل رضوی،قاری خلیل مہروی،مرزا تجمل بیگ،مولانا حاجی شوکت علی،قاری لیاقت علی رضوی،مولانا مستنصراحمد نورانی، مولانامحمد فیضان،مولانا صالح محمد اویسی، مولانا محمود اختر رضوی،مولانا شبیر حسین فریدی،مولانا قاری محمد اعظم قادری اوردیگر قائدین نے ملک بھر میں مختلف شہروں میں یوم دعااور قرآن خوانی کے موقع پر اپنے خطابات کیے

۔یوم دعا پر قائدین جمعیت علماء پاکستان نے کہا ہے کہ ملک اس وقت طرح طرح کی مشکلات سے دو چار ہے۔ہم بطور مسلمان اسلام کی تہذیب اور تعلیمات سے کوسوں دور جاچکے ہیں سانحہ مری میں وہاں کے ہوٹلز مالکان اور خوردونوش فروخت کرنے والوں نے جو غیر انسانی،غیر اخلاقی اور غیر اسلامی سلوک روا رکھا اس سے پوری قوم کے سرشرم سے جھکے ہوئے ہیں۔جبکہ دوسری جانب چنداہل دل اور انسانیت کا درد رکھنے والوں نے متاثرین کی جو خدمت کی وہ بلا شبہ سلیوٹ اور قوم کی دعا?ں کے مستحق ہیں۔سانحہ مری حکمرانوں کے ماتھے پر بدنما داغ ہے۔سانحہ رونما ہونے سے ایسا معلوم ہوتا ہے کہ انتظامیہ بے حسی کی نیند سو رہے تھے وہاں مری میں تاریخ کا بدترین برف کا طوفان برپا تھا اور پنجاب کے حکمران اورانتظامیہ دوسرے معاملات میں مصروف تھے۔قائدین نے کہا کہ سانحہ مری پر عثمان بزدار اور ان کی کابینہ ذمہ دار ہے۔جو وہاں کے حالات سے بے خبر تھے اور سیاح موت کی آغوش میں جارہے تھے ایسے طوفانوں کا محکمہ موسمیات پہلے اطلاع دے دیتا ہے مگر اس کے بچا? کے لئے اقدامات نا کرنا حکومت پنجاب اور انتظامیہ کی نااہلی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔قائدین نے کہا کہ مری کے حادثے پر 50,50 ہزار فی شب کرایہ وصول کرنے والوں اور سیاحوں کو لوٹنے والوں کے خلاف سخت ترین کارروائی کی جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -