کرپشن ثابت ،گروناتھ میاپن پر 5سال تک کرکٹ سرگرمیوں میں حصہ لینے کی پابندی

کرپشن ثابت ،گروناتھ میاپن پر 5سال تک کرکٹ سرگرمیوں میں حصہ لینے کی پابندی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app


نئی دہلی (آئی این پی) آئی پی ایل کرپشن پر قائم تحقیقاتی کمیٹی نے آئی سی سی کے چیئر مین سری نواسن کے داما د گروناتھ میاپن پر میچ فکسنگ کا الزام ثابت ہونے کے بعد 5سال کیلئے ہر قسم کی کرکٹ سرگرمیوں میں شرکت پر پابندی ‘ان کی ٹیم چنائی سپر کنگ پر 2 سال کی پابندی عائد کر دی‘راجستھان رائلز کے سابق مالک راج کنندرا پر کسی بھی قسم کی کرکٹ سرگرمیوں میں حصہ لینے پر تاحیات پابندی اور انتظامی امور کیلئے 5 سال کیلئے پابندی عائد کر دی گئی ۔ تفصیلات کے مطابق آئی پی ایل کرپشن کی تحقیقات کے لیے بھارتی سپریم کورٹ نے سابق چیف جسٹس راجندرا مال لودھا کی سربراہی میں تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دی تھی جس نے تحقیقات کے بعد آج فیصلہ سنایا۔ فیصلے میں کہا گیا ہے کہ اس وقت کے چنائی سپنر کنگز کے مالک گروناتھ میاپن اینٹی کرپشن قوانین کی خلاف ورزی کرتے ہوئے میچ فکسنگ میں ملوث پائے گئے ہیں جس سے اس کھیل کی ساکھ کو نقصان پہنچا، انہوں نے کرکٹ میچز پر بڑی بڑی رقومات لگائیں اور اس کھیل کو بدنام کیا۔ تحقیقاتی کمیٹی کا مزید کہنا تھا کہ راجستھان رائلز کے سابق مالک راج کنندرا بھی اس سٹے بازی میں ملوث پائے گئے ہیں جس کے بعد ان پر کسی بھی قسم کی کرکٹ سرگرمیوں میں حصہ لینے پر تاحیات پابندی لگا دی گئی ہے۔