انڈیکس تاریخی بلند ترین سطح چھونے کے بعدمنفی زون میں چلاگیا

انڈیکس تاریخی بلند ترین سطح چھونے کے بعدمنفی زون میں چلاگیا

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

کراچی (اکنامک رپورٹر) کراچی اسٹاک مارکیٹ کاروباری اتار چرھاؤ کے بعد مندی کی زد میں آگئی ،کے ایس ای100انڈیکس ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح 35725پوائنٹس کو چھونے کے بعد منفی زون میں چلی گئی تاہم انڈیکس کمی کے باوجود 35400پوائنٹس کی سطح پر بند ہوا، مندی کے سبب اسٹاک مارکیٹ میں سرمایہ کاروں کے 31ارب سے زائد روپے ڈوب گئے ۔ منگل کو کراچی اسٹاک مارکیٹ میں کاروبار کے آغاز سے ہی اتار چڑھاؤ کا رجحان دیکھا گیا دوران ٹریڈنگ سرمایہ کاروں کی جانب سے پیٹرولیم، توانائی اور فرٹیلائزر سیکٹر میں سرمایہ کاری کے سبب انڈیکس 35724.53پوائنٹس کی بلند ترین سطح پر جا پہنچا جبکہ قیمت بڑھنے پر منافع خوری کی خاطر حصص کے فروخت پر دباؤ کے سبب انڈیکس دوران ٹریڈنگ 35369.71پوائنٹس کی نچلی سطح تک گر گیا۔منگل کو کاروبار کے اختتام پر کے ایس ای 100انڈیکس میں 49.73 پوائنٹس کی کمی واقع ہوئی جس کے باعث انڈیکس 35496.62پوائنٹس سے گھٹ کر 35446.89پوائنٹس پر بند ہوا، اسی طرح 142.63پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای 30انڈیکس 22085.65پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 24713.89پوائنٹس سے کم ہو کر 24610.91پوائنٹس پر آگیا۔

مندی کے سبب اسٹاک مارکیٹ کے سرمائے سے 31ارب 86کروڑ 2لاکھ 32ہزار 160روپے کی کی ریکارڈ کی گئی جس کے نتیجے میں اسٹاک مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 76کھرب 33ارب 81کروڑ 20لاکھ 60ہزار 401روپے سے کم ہو کر 76کھرب 1ارب 95کروڑ 18لاکھ 28ہزار 241روپے ہو گیا۔ منگل کو مارکیٹ میں 41کروڑ 73لاکھ 99ہزار حصص کے سودے ہوئے اور ٹریڈنگ ویلیو 15ارب روپے ریکارڈ کیا گیا جبکہ پیر کو 34کرور 55لاکھ 42ہزار حصص کا کاروبار ہوا اور ٹریڈنگ ویلیو 13ارب روپے تک محدود رہا۔ منگل کے روز کراچی اسٹاک مارکیٹ میں مجموعی طور پر 380کمپنیوں کا کاروبار ہوا جن میں سے 210کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں اضافہ، 142میں کمی اور 28کمپنیوں کے شیئرز کی قیمتوں میں استحکام رہا ۔ کاروبار کے لحاظ سے دیوان سلمان 3کروڑ 22لاکھ،ازگارڈ نائن 2کروڑ 47لاکھ، بائیکو پیٹرولیم 2کروڑ، کے الیکٹرک 1کروڑ 92لاکھ اور پیس پاک 1کروڑ 62لاکھ حصص کے سودوں کے ساتھ سرفہرست رہے۔ قیمتوں میں اتار چڑھاؤ کے اعتبار سے کولگیٹ پامولیو کے بھاؤ میں 47روپے اور موی برویورے کے بھاؤ میں 42.75روپے کا اضافہ جبکہ رفحان میظ کے بھاؤ میں 200روپے اور باٹاک پاک کے بھاؤ میں 55.50روپے کی نمایاں کمی ریکارڈ کی گئی۔ #/s#

مزید :

کامرس -