لیپرو سکوپی آپریشن کے بعد مریض صحت یاب ہو جاتا ہے، شاہد خٹک

لیپرو سکوپی آپریشن کے بعد مریض صحت یاب ہو جاتا ہے، شاہد خٹک

لاہور (پ ر)کنسلٹنٹ سرجن ڈاکٹر شاہد خٹک شوکت خانم میموریل کینسر ہسپتال اور ریسرچ سنٹر کے سرجیکل اونکولوجی ڈپارٹمنٹ کے ہیڈ ہیں۔ ڈاکٹر شاہد گیسٹرو انٹسٹائنل سرجری کے سپیشلسٹ ہیں اور اس حوالے سے ایکسپرٹ کے طور پر پہچانے جاتے ہیں ۔ اس فیلڈ میں ہونے والی نت نئی جدت کے حوالے سے گزشتہ روز ڈاکٹر صاحب نے ہیلتھ رپورٹرز کے ایک وفد سے گفتگو کی۔ڈاکٹر صاحب کا کہنا تھا کہ سرجری کی فیلڈ بہت وسیع ہے ۔بہتر نتائج کے لیے سرجری کے شعبے میں ہمہ وقت تحقیق کا کام جاری رہتا ہے اور ایک سرجن کو مستقل طور پر اپنی سپیشلائزڈ فیلڈ کے بارے میں جدید ٹیکنالوجی سے آگاہ رہنا پڑتا ہے۔ اس شعبے میں موجودہ رجحان site specializationکا ہے جس کا مطلب ہے کہ ایک ڈاکٹر کسی ایک مخصوص عضو یا بیماری کا ہی علاج کرے گا ۔لیپرو سکوپی کے بارے میں بات کرتے ہوےء ڈاکٹر شاہد نے بتایا کہ گزشتہ دہائی میں اس سلسلے میں ہونے والی اہم پیش رفت لیپرو سکوپی (Laparoscopy) ہے ۔

اس ٹیکنالوجی کی مدد سے مریض کے جسم کے متائثرہ حصوں خصوصاً پیٹ اور سینے کے اندر کیمرے کی مدد سے سکرین پر آسانی سے دیکھا جا سکتا ہے جو اس سے پہلے آسانی سے دیکھنا ممکن نہیں ہوتا تھا۔اس ٹیکنالوجی کا دوسرا بڑا فائدہ یہ ہے کہ اوپن سرجری کے برعکس مریض کے جسم پر بڑا کٹ لگائے بغیر ہی آہریشن کامیابی سے مکمل کیا جاسکتا ہے۔ اس طرح آپریشن کے بعد مریض کی ریکوری جلد اور آسان ہو جاتی ہے ۔ ابتداء میں لیپروسکوپی نان کینسر آپریشنز میں استعمال ہوتی تھی لیکن اب کینسر کے مریضوں کے آپریشنز میں بھی اس کا کامیابی سے استعمال کیا جا رہا ہے۔ڈاکٹر صاحب کے مطابق لیپرو سکوپی یا ویڈیو اسسٹڈ سرجری کا زیادہ تر استعمال پھیپھڑوں، خوراک کی نالی اور آنتوں کے کینسر کے آپریشن میں ہوتا ہے۔ پاکستان میں اگرچہ یہ ٹیکنالوجی کافی ہسپتالوں میں استعمال کی جارہی ہے لیکن کینسرکے علاج کے لیے مخصوص ہونے کے باعث شوکت خانم ہسپتال میں اس ٹیکنالوجی کا زیادہ ا ستعمال کیا جاتا ہے۔ ڈاکٹر صاحب کے مطابق اگرچہ لیپرو سکوپی کی کامیابی کے تناسب کے بارے میں کچھ کہنا ابھی قبل از وقت ہو گا لیکن شارٹ ٹائم نتائج سے اس بات کا اندازہ لاگایا جاسکتا ہے کہ دور رس نتائج بھی بہتر ہوں گے۔ امید کی جاسکتی ہے کہ اس ٹیکنالوجی میں مزید بہتری بھی آتی رہے گی جو پیچیدو آپریشنز میں ڈاکٹروں کے لیے مزید سہولت کا باعث بنے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4