انتخابی مہم زوروں پر، مختلف دھڑوں کی حمایت سے خلیل الرحمن کی پوزیشن مستحکم

انتخابی مہم زوروں پر، مختلف دھڑوں کی حمایت سے خلیل الرحمن کی پوزیشن مستحکم

رینالہ خورد(سرفراز انجم سے)پی پی 183سے چوہدری جاوید علاؤ الدین اور این اے 141سے چوہدری خلیل الرحمان کی جیت یقینی ہو گئی ،چوہدری جاوید علاؤ الدین کے مد مقابل مضبوط امیدوار ملک محمد اکرم بھٹی جبکہ چوہدری خلیل الرحمان کا مقابلہ شیر سے بتایا جا رہا ہے تفصیلات کے مطابق حلقہ این اے 141سے آزاد امیدوار چوہدری خلیل الرحمٰن کی انتخابی مہم میں بڑی تیزی آچکی ہے علاقہ بھر سے ہر روز بڑے سیاسی دھڑے انکی حمایت کااعلان کررہے ہیں گذشتہ روزچکنمبر24ٹوایل کے سرکردہ رہنماؤں نمبردار رانا عبدالشکور ،ریٹائرڈہیڈماسٹر چوہدری اکبر علی، حاجی نذیر بلندہ، چوہدری رفیق جالندھری، ڈاکٹر اکرم، عبدالرشید بھٹی، غلام مصطفی جٹ، چوہدری صفدر کمبوہ،فوجی عمران اکبر، چکنمبر28ٹوایل سے راؤ تحسین خاں، حاجی محمدحسین کمیانہ، راؤ حاجی حشمت خاں۔ فوجی مہر محمدصدیق، چوہدری نور محمد، چوہدری محمدرفیق، شیخ محمداسلم، چوہدری محمداشرف، 27ٹوایل سے رانا سرفراز احمد، محمدافتخار، صداقت علی خاں نے اپنے اپنے گاؤں میں الگ الگ جلسوں کاانعقاد کیا اور اپنے سیاسی دھڑوں کے ساتھ آزاد امیدوار حلقہ این اے 141چوہدری خلیل الرحمٰن کی حمایت کااعلان کیا۔ دوسری طرف پی پی 183میں چوہدری جاوید علاؤلدین جو دو مرتبہ پہلے بھی ایم پی اے منتخب ہو چکے ہیں انہوں نے اپنے تمام حریفوں کو پیچھے چھوڑ دیا ہے کچھ روز قبل تک یہ توقع کی جا رہی تھی کہ مقابلہ ففٹی ففٹی ہے مگر رینالہ شہر اور ملحقہ آبادیوں میں ملک محمد اکرم بھٹی کا ووٹ بینک نہ ہونے سے ان کے لئے اپنی اپنی پوزیشن بر قرار رکھنا مشکل ہو گیا ہے ۔واضح رہے کہ پی پی 183سے معروف سیاستدان راؤ واجد علی خان کے صاحبزادے راؤ عابد علی انتھک جیت کی کوشش کر رہے ہیں اور ان کے بھائی راؤ عمران واجد کا کہنا ہے کہ اگر پی ٹی آئی ملک محمد اکرم بھٹی کو کو ٹکٹ دے دیتی تو وہ الیکشن ون سائیڈڈ جیت سکتے تھے لیکن اب راؤ عابد اس بات کا فائدہ اٹھائیں گے۔

مزید : علاقائی