انتخابی عمل ہرحال میں رہے گا : الیکشن کمیشن ، پر امن انتخابات کیلئے کوشاں ہیں : نگران حکومت

انتخابی عمل ہرحال میں رہے گا : الیکشن کمیشن ، پر امن انتخابات کیلئے کوشاں ہیں ...

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) الیکشن کمیشن نے متفقہ طور پر انتخابی عمل ہر حال میں جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انتخابی عمل ہر حال میں جاری رہے گا،عام انتخابات 25 جولائی کو ہی ہونگے،نیکٹا کو آرڈینیٹر سلمان خان ، دہشت گردی کی بزدلانہ کاروائیوں سے الیکشن کسی صورت ملتوی نہیں ہو ں گے، بیرسٹر علی ظفر، الیکشن کمیشن کی حالیہ دہشتگردی واقعات کی بھرپور مذمت۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر اطلاعات بیرسٹر علی ظفر نے کہا ہے کہ دہشت گردی کی ایسی کاروائیوں سے الیکشن کسی صورت ملتوی نہیں ہو گا ،نگران حکومت پر امن انتخابات کے حوالے سے الیکشن کمیشن کے ساتھ مل کر اقدامات کر رہی ہے ۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ مستونگ سانحہ پر ایک روزہ قومی سوگ کا اعلان کیا گیا ہے اتوار کو تمام قومی عمارتوں پر قومی پرچم سر نگوں رہے گا انہوں نے کہا کہ دہشت گردی کی ایسی کاروائیوں سے الیکشن کسی صورت ملتوی نہیں ہو گا وزیر اطلاعات نے کہاکہ نگران حکومت پر امن انتخابات کے حوالے سے الیکشن کمیشن کے ساتھ مل کر اقدامات کر رہی ہے۔دریں اثناالیکشن کمیشن نے حالیہ دہشتگردی واقعات کی بھرپور مذمت کی ہے ۔عام انتخابات 2018 کو سیکورٹی خطرات کے معاملہ پر الیکشن کمیشن کو نیکٹا حکام نے بریفنگ دی، نیکٹا کوآرڈینیٹر ڈاکٹر سلمان خان نے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ عام انتخابات 2018 کو کوئی سنجیدہ خطرہ نہیں ہے، عام انتخابات 25 جولائی کو ہی ہونگے،عام انتخابات کو پرامن بنانے کے لیے کوششیں کررہے ہیں، سیکورٹی خدشات سے متعلق الرٹس باقاعدہ صوبائی حکومتوں کو بھجوائے جاتے ہیں۔ دریں اثنا الیکشن کمیشن نے متفقہ طور پر انتخابی عمل ہر حال میں جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انتخابی عمل ہر حال میں جاری رہے گا، اس سلسلے میں عوام کو کسی بھی مایوسی سے نکلنا چاہیے ،تمام ادار ے مل کر کام کر یں ،سیاسی پارٹیاں آپس میں روابط اور مقامی سطح پر انتظامیہ کے ساتھ کو آرڈینیشن اور معلومات کا تبادلہ فوری اور بہتر بنائیں، نیکٹا کو الیکشن کمیشن کو تازہ ترین اینالائسز سے مسلسل آگاہ رکھے ۔ تفصیلات کے مطابق نیکٹا کوآرڈینیٹر ڈاکٹر محمد سلیمان خان نے چیف الیکشن کمشنر کے چیمبر میں الیکشن کمیشن کو سیکیورٹی خدشات اور ملک میں سیکیورٹی کی مجموعی صورتحال پر بریفنگ دی جس میں ملک میں مختلف سیاسی شخصیات اورمقامات پر سیکیورٹی خدشات کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا گیا۔ملک میں تازہ دہشت گرد حملوں کی پرزور مذمت کی گئی اور مستونگ کے متاثرہ خاندانوں کے ساتھ اظہار افسوس کیا۔تفصیلی بریفنگ کے بعد الیکشن کمیشن نے صوبائی حکومتوں کو بھی ہدایات جاری کر دیں کہ اداروں کے ساتھ مل کر سیکیورٹی صورتحال کا باریکی سے جائزہ لے کر لائحہ عمل اختیار کیا جائے، انتخابات کو پر امن بنانے کیلئے تمام عوام اور سیاسی پارٹیاں آپس میں تعاون جاری رکھیں۔ آخر میں نیکٹا کو ہدایت کی گئی کہ الیکشن کمیشن کو تازہ ترین اینالائسز سے مسلسل آگاہ رکھیں۔

الیکشن،علی ظفر

مزید : صفحہ اول