جے یو آئی (نظریاتی) منافقانہ سیاست کی قائل نہیں : مولانا خلیل احمد

جے یو آئی (نظریاتی) منافقانہ سیاست کی قائل نہیں : مولانا خلیل احمد

ٹوپی ( نمامہ نگار) جے یو آئی نظریاتی کے مقبولیت میں اضافہ کلابٹ ، بٹاکڑہ، منگل چائی ، تکیل اور دالوڑی میں عوامی اجتماعات سے خطاب کے دوران کثیر تعدا د میں لوگوں نے جے یو آئی نظریاتی میں شمولیت کا اظہار کیا اجتماعات سے جماعت کے مرکزی امیر اور این اے 18 کیلئے جو یو آئی نظریاتی ، پاکستان پیپلزپارٹی اور پی ٹی آئی نظریاتی کے مشترکہ امید وار مولانا خلیل احمد مخلص نے خطاب کر تے ہوئیے کہا کہ جے یو آئی جھوٹ اور منفقانہ سیاست کی جھوٹ اور منافقت کی سیاست کی قائل نہیں میں 2002میں ممبر قومی اسمبلی منتخب ہوا تھا میری زندگی ایک کھلی کتاب ہے میں اپنے آپ کو ہر وقت اختساب کیلئے پیش کر نے کو تیار ہوں مجھ پر اگر کسی نے ثابت کیا کہ میں نے جائیداد خریدی ہے فیکٹری بنائی ہے اور یا میرا کروڑوں اور اربوں میں بینک بیلنس ہے تو میں وہ سب انہی کے نام منتقل کرا دونگا دوسری طرف میرے مقابلے میں ان لوگوں کا جائزہ لے جو کہا ں سے کہاں پہنچ گئے آپ کو معلوم ہے اس کے باوجود اگر کوئی برادری تعلق سفارش یا کسی ذاتی لالچ پر باطل کو حق پر ترجیح دیتا ہے تو یہ لوگ نہ صرف اپنے ذات کے بلکہ اپنے آنے والے نسلوں کے ساتھ بھی زیادتی کر رہا ہے انہوں نے کہا کہ میں نہ کل بھکا ہو ں اور نہ آئیندہ مجھے کوئی خرید سکتا ہے میری تمام جد وجہد اسلامی نظام کی نفاظ اور پسے ہوئے لوگوں کے حقوق کے حصول کیلئے ہیں انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ 25 جولائی کو تختی پر مہر لگا کر جے یو آئی نظریاتی کے امید واروں کو کامیاب کر کے اس ملک کی تقدید بدل دیں اجتماعات سے پی کے 43 کے امید وار آصف کریم خان اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر