جیل اور گرفتاریاں مسلم لیگ ن کی قیادت کا کچھ نہیں بگاڑ سکتیں،افتخار شاہ

جیل اور گرفتاریاں مسلم لیگ ن کی قیادت کا کچھ نہیں بگاڑ سکتیں،افتخار شاہ

مظفرآباد (سٹی رپورٹر)مسلم لیگ ن آزادکشمیر کی مرکزی مجلس عاملہ کے ممبر سید افتخار حسین شاہ نے کہا ہے کہ جیل اور گرفتاریاں مسلم لیگ ن کی قیادت کا کچھ نہیں بگاڑ سکتیں ۔ اگر میاں نواز شریف گناہ گار ہوتے تو ملک واپس نہ آتے ۔ انہوں نے واپس آکر ثابت کردیا کہ وہ ہی ملک کی حقیقی قیادت ہیں۔مسلم لیگ ن ایک بار پھر بھاری اکثریت سے کامیاب ہو کر حکومت بنائے گی۔ گزشتہ روز کارکنان کی بڑی تعداد لاہور قائد میاں محمد نواز شریف اورمحترمہ مریم نواز کے استقبال کیلئے پہنچے آزاد کشمیر سے بھی کارکنان نے قافلوں کی صورت میں شرکت کی ۔ نگران حکومت اور انتظامیہ نے جابجا رکاوٹیں لگا کر کارکنوں کو استقبال سے روکا ۔ لاہور کو عملاً یرغمال بنا یا گیا تھا۔ نواز شریف کی خاطر جان کا نذارانہ پیش کرینگے اور خون کا آخری قطرہ تک بہا دینگے۔ گزشتہ روز صحافیوں سے ٹیلی فونک گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ مسلم لیگ ن کو کوئی نادیدہ قوت ختم نہیں کرسکتی ہے۔ مسلم لیگ ن آج بھی پاکستان کی سب سے بڑی جماعت ہے۔ تین بار ملک کی وزارت عظمیٰ پر رہنے والے ایشیاء کے بڑے لیڈر میاں محمد نواز شریف کو بے بنیاد کیسوں کے ذریعے وزارت عظمیٰ سے ہٹانا کہاں کا انصاف ہے ؟ کارکنان گرفتاریوں سے ڈرنے والے نہیں ہم قیادت کے ہر حکم پر لبیک کہیں گے۔ یہ جیپ والے ‘ یہ بلے والے اور یہ تیر والے سب ناکام ہو نگے ۔ 25جولائی کو صر ف شیر دھاڑے گااور مسلم لیگ ن پھر عوام کی طاقت سے حکومت بنائے گی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر