چین میں خاتون نے صدر شی جن پنگ کی تصویر پر سیاہی پھینک دی، پھر اس کے ساتھ کیا ہوا؟ جان کر پاکستانی کانپ اُٹھیں گے

چین میں خاتون نے صدر شی جن پنگ کی تصویر پر سیاہی پھینک دی، پھر اس کے ساتھ کیا ...
چین میں خاتون نے صدر شی جن پنگ کی تصویر پر سیاہی پھینک دی، پھر اس کے ساتھ کیا ہوا؟ جان کر پاکستانی کانپ اُٹھیں گے

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) چین میں بیٹی کی جبری گمشدگی پر باپ نے یوٹیوب پر ایسی ویڈیو پوسٹ کر دی کہ کوئی چین میں اس کا تصور بھی نہ کر سکتا تھا۔ ہانگ کانگ ایف پی کی رپورٹ کے مطابق ڈونگ جیان بیاؤ نامی اس شخص کا تعلق چینی صوبے ہنوان کے شہر ژوژاؤ سے ہے جس کی بیٹی یاؤ کیانگ کئی ہفتے سے لاپتہ ہے اور ڈونگ جیان کو شبہ ہے کہ اسے پولیس نے گرفتار کرکے نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا ہے۔ ڈونگ نے اس سے پہلے بھی کئی ویڈیوز پوسٹ کیں جن میں اس نے پولیس سے اپنی بیٹی کا اتاپتا بتانے کا مطالبہ کیا اور پوچھا کہ آخر اس کا جرم کیا ہے، لیکن گزشتہ روز اس نے پولیس اور ریاست کے خلاف احتجاج کرتے ہوئے ایک اور لائیو ویڈیو کی جس میں اس نے چینی صدر ژی جن پنگ کے پوسٹر پر سیاہی پھینک دی۔

یہ ویڈیو دیکھتے ہی پولیس حرکت میں آ گئی اور فوری طور پر ویڈیو کو ویب سائٹ سے ہٹا دیا گیا۔ یاؤ کیانگ نے اپنی گمشدگی سے قبل اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر ایک ویڈیو پوسٹ کی تھی جس میں وہ بہت خوفزدہ تھی اور کہہ رہی تھی کہ پولیس گھر کے درواز پر کھڑی ہے۔ اس کے کچھ ہی دیر بعد اس کا ٹوئٹراکاؤنٹ ہی ڈیلیٹ کر دیا گیا۔ ڈونگ جیان کا کہنا ہے کہ اس ویڈیو سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ میری بیٹی پولیس کی حراست میں ہے۔حکومت بیجنگ سے مہاجرین کو جبری طور پر نکال رہی ہے جس کے خلاف میری بیٹی آواز اٹھا رہی تھی۔ یہی وجہ ہے کہ پولیس نے اسے گرفتار کر لیا ہے اور ہمیں اس کے بارے میں کچھ نہیں بتایاجا رہا۔‘‘

مزید : ڈیلی بائیٹس