خاتون اسسٹنٹ کنٹرولر کو برطرفی کیخلاف کیس میں ترمیمی رٹ جمع کرنے کی ہدایت

  خاتون اسسٹنٹ کنٹرولر کو برطرفی کیخلاف کیس میں ترمیمی رٹ جمع کرنے کی ہدایت

  

پشاور(نیوز رپورٹر) پشاورہائیکورٹ نے ویمن یونیورسٹی صوابی کی خاتون اسسٹنٹ کنٹرولر کی برطرفی کے خلاف دائر کیس میں درخواست گزارہ کو ترمیمی رٹ جمع کرنے کی ہدایت کردی دورکنی بنچ نے آمنہ کرن کیجانب سے دائر رٹ پر سماعت کی درخواست گزارہ کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ انکی موکلہ این ٹی ایس کے ذریعے ویمن یونیورسٹی صوابی میں 2014میں کنٹریکٹ پر لیکچرر بھرتی ہوئیں اورٹیسٹ میں ٹاپ 3میں تھیں جبکہ پانچ سال بعد انہیں گریڈ 17میں اسسٹنٹ کنٹرولر تعینات کیاگیاتاہم ایک سال بعد ہی انہیں ریلیوکرکے ملازمت سے بھی برطرف کردیاگیا جس کے خلاف عدالت سے رجوع کیا گیا اس موقع پر مخالف فریق کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ درخواست گزارہ اسسٹنٹ کنٹرولر کے عہدے پر ایک سال کے عرصہ کیلئے کنٹریکٹ پر تھیں جو ختم ہوچکاہے جبکہ رٹ پٹیشن میں انہوں نے جو ریلیف مانگا ہے اس کیلئے وہ اہل نہیں دورکنی بنچ نے رٹ پر دلائل مکمل ہونے پر قراردیا کہ درخواست گزارہ کو ایک موقع دیاجاتا ہے اگردرخواست گزارہ چاہیں تو ترمیمی رٹ پٹیشن عدالت میں جمع کرسکتی ہیں۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -