میانمار میں 5لاکھ افراد کو ہنگامی بنیادوں پر مدد کی ضرورت ہے ‘ اقوام متحدہ

میانمار میں 5لاکھ افراد کو ہنگامی بنیادوں پر مدد کی ضرورت ہے ‘ اقوام متحدہ

 نیویارک(این این آئی)اقوامِ متحدہ کے ہیومینیٹیرین آفس نے کہا ہے کہ میانمار کی مغربی ریاست راکھینی میں تین برسوں سے جاری خانہ جنگی سے تباہ حال پانچ لاکھ افراد کو انسانی ہمدردی کی بنیادوں پر مدد کی ضرورت ہے۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق اقوامِ متحدہ کے انسانی ہمدری سے متعلق ادارے نے بتایا کہ ان افراد میں سے زیادہ تر مسلمان ہیں ان لوگوں میں سے 4 لاکھ 16 ہزار سے زیادہ کی تعداد کو مدد کی شدید ضرورت ہے، جن میں تقریباً ایک لاکھ چالیس ہزار بے گھر افراد ایسے بھی ہیں، جو کیمپوں کی بدترین صورتحال میں زندگی گزارنے پر مجبور ہیں ان میں سے بہت سے دیگر شہریت سے محروم دیہاتوں میں محصور ہیں۔اس حوالے سے انسانی ہمدردی سے متعلق رابطہ آفس (او سی ایچ اے) نے تصدیق کی کہ ان لوگوں کی چالیس ہزار سے زیادہ کی تعداد راکھینی ریاست میں 500 میٹر کی ساحلی پٹی پر کیمپوں میں مقیم ہے۔ مون سون کی آمد کے ساتھ ہی ان کی زندگی کو شدید خطرات لاحق ہیں۔

مزید : عالمی منظر