خیبر پختونخوا کا مالی سال 16۔2015 کا بجٹ آج پیش کیا جائیگا

خیبر پختونخوا کا مالی سال 16۔2015 کا بجٹ آج پیش کیا جائیگا

پشاور(آئی این پی)خیبر پختونخوا کا مالی سال 16۔2015 کا بجٹ (آج) پیر کو صوبائی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا جس میں سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں دس فییصد اضافے کا امکان ہے۔محکمہ خزانہ کے ذرائع کے مطابق صوبے کے نئے مالی سال کے بجٹ کا حجم 472 ارب روپے ہوگا بجٹ میں غریب عوام کو سستے داموں اشیائے ضرورت کی فراہمی کی اسکیم جاری رکھتے ہوئے سستا پیکج کے لیئے 6 ارب روپے رکھے جانے کا امکان ہے جبکہ روزگار کے مواقع کے لیئے ایک لاکھ 59 ہزار آسامیاں پیدا کی جائیں گی جس کے مطابق محکمہ صحت کے 2 ہزار اور محکمہ تعلیم میں دس ہزار آسامیاں پیدا کرنے کی تجویز ہے۔ذرائع کے مطابق وفاق سے 366 ارب ملنے کا بھی امکان ہے بجٹ میں ترقیاتی حجم 126 روپے متوقع ہیاسکول اینڈ لٹریسی فنڈ ایک کھرب اعلی تعلیم 13 ارب اور بلدیات کے لیئے چالیس ارب کا فنڈ مختص کئے جانے کا امکان ہے۔ صحت کے لیئے 35 ارب جبکہ امن و امان کے بجٹ میں 19 فیصد اضافے کا امکان ہے بجلی کے خالص منافع کی مد میں 17 ارب ملنے کا امکان ہے حیات آبا فیز تھری فلائی آور کے لیئے ایک ارب 60 کروڑ روپے رکھے جانے کی توقع ہے جبکہ پنشن اور تنخواہوں میں دس فیصد اضافے کی تجویز بھی زیر غور ہے۔

مزید : کامرس