آزاد کشمیر اسمبلی کی سابق رکن شوہر کی بازیابی کے لئے لاہور ہائی کورٹ پہنچ گئی

آزاد کشمیر اسمبلی کی سابق رکن شوہر کی بازیابی کے لئے لاہور ہائی کورٹ پہنچ گئی
 آزاد کشمیر اسمبلی کی سابق رکن شوہر کی بازیابی کے لئے لاہور ہائی کورٹ پہنچ گئی

  

لاہور (نامہ نگار خصوصی) آزاد کشمیر اسمبلی کی سابق ممبر اور پیپلز پارٹی کی آزاد کشمیر کی رہنما شہزادہ کوثر گیلانی اپنے شوہر کی بازیابی کے لئے لاہور ہائیکورٹ پہنچ گئیں، خاتون رہنماءنے شوہر سید سرفراز حسین شیرازی کی بازیابی کے لئے عدالت میں حبس بیجا کی درخواست دائر کر دی۔افتخار شاہد ایڈووکیٹ کی وساطت سے دائر حبس بے جا کی درخواست میں آزاد کشمیر اسمبلی کی سابق ممبر شہزادہ کوثر گیلانی نے موقف اختیار کیا ہے کہ 11جون کی رات ان کے شوہر سید سرفراز حسین شیراز ی اپنی ساتھی ریحانہ بٹ کے ساتھ کینٹ کے ایک ہوٹل میں کھانا کھا رہے تھے کہ بھلوال پولیس کی گاڑی میں آئے اہلکاروں نے انہیں اغواءکر لیا اور اپنے ساتھ لے گئے، چار دن گزرنے کے باوجود آئی جی پولیس سے لے کر بھلوال پولیس تک کوئی بھی ان کے شوہر سے متعلق آگاہ نہیں کر رہاہے.

خاتون رہنماءنے درخواست میں کہا ہے کہ آزاد کشمیر میں پیپلز پارٹی کی حمایت کرنے پر مسلم لیگ (ن) نے اوچھے ہتھکنڈے اپناتے ہوئے ان کے شوہر کو سیاسی انتقام کا نشانہ بنایا ہے اور خدشہ ہے کہ انہیں پولیس مقابلے میں مار دیا جائے گا، درخواست میں آئی جی پولیس سمیت دیگر افسروں کو فریق بناتے ہوئے استدعا کی گئی ہے کہ ان کے شوہر سید سرفراز حسین شیراز ی بازیاب کراکر عدالت میں پیش کیا جائے۔

مزید : لاہور