ہائی کورٹ :پی سی بی کی ویمن کرکٹ ٹیم بنانے کے خلاف درخواست خارج

ہائی کورٹ :پی سی بی کی ویمن کرکٹ ٹیم بنانے کے خلاف درخواست خارج
ہائی کورٹ :پی سی بی کی ویمن کرکٹ ٹیم بنانے کے خلاف درخواست خارج

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

لاہور (نامہ نگار خصوصی)لاہور ہائی کورٹ نے پی سی بی کی جانب سے ویمن کرکٹ ٹیم بنانے کے خلاف درخواست عدم پیروی پر مسترد کر دی ،مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے ویمن کرکٹ ایسوسی ایشن کی درخواست پر سماعت شروع کی تودرخواست گزار ایسوسی ایشن کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ پی سی بی نے خواتین کی کرکٹ ٹیم تشکیل دی ہے جو غیر قانونی ہے کیونکہ ویمن کرکٹ ایسوسی ایشن بین الاقوامی طور پر تسلیم شدہ ہے اور خواتین کی کرکٹ ٹیم صرف ایسوسی ایشن ہی بنا سکتی ہے ،عدالت پی سی بی کی جانب سے بنائی گئی ٹیم کو کالعدم قر ار دیا جائے اور ویمن کرکٹ ایسوسی ایشن کو خواتین کی کرکٹ ٹیم منتخب کرنے کا اختیار دیا جائے، پاکستان کرکٹ بورڈ کے وکیل تفضل رضوی ایڈووکیٹ نے عدالت کو بتایا کہ پاکستان میں کرکٹ کے انتظامی امور صرف پی سی بی ہی دیکھ سکتا ہے اور خواتین کی ٹیم بنانے کا اختیار اسے ہی حاصل ہے انہوں نے عدالت کو بتایا کہ درخواست گزار کے وکیل گزشتہ کئی سماعتوں سے پیش نہیں ہو رہے اس لیے درخواست مسترد کی جائے۔ عدالت نے پی سی بی کے وکیل کے دلائل سننے کے بعد عدم پیروی پر درخواست مسترد کر دی۔

مزید : لاہور