’میں نے مسلسل 10 روز تک ایک لفظ بھی نہیں بولا اور اس سے مَیں نے یہ بات سیکھی کہ۔۔۔

’میں نے مسلسل 10 روز تک ایک لفظ بھی نہیں بولا اور اس سے مَیں نے یہ بات سیکھی ...
’میں نے مسلسل 10 روز تک ایک لفظ بھی نہیں بولا اور اس سے مَیں نے یہ بات سیکھی کہ۔۔۔

  


ٹوکیو(نیوزڈیسک) اگرآپ کو کہاجائے کہ تھوڑی دیر کے لئے آپ کو اپنے اردگرد موجود لوگوں سے بالکل بات نہیں کرنی تو یقیناًآپ کے لئے یہ بات ناقابل قبول ہوگی،آپ چاہ کر بھی چپ نہیں رہ سکیں گے، کجا یہ کہ آپ ایک یا دودن کے لئے خاموش رہیں۔

حال ہی میں ایک بلاگر ریان پاگ نے لکھا ہے کہ اسے 10دن کے لئے کچھ نہیں بول کر انتہائی عجیب محسوس ہوا۔اس کاکہنا ہے کہ اس سے قبل بھی ایسا کرنے کی کوشش کی لیکن کامیابی نہیں ہوئی کیونکہ منہ بند رکھ کر کسی سے بات کئے بغیر رہنا انتہائی مشکل کام ہے۔وہ کہتا ہے کہ جب وہ میانمارپہنچا تو وہاں اسے یہ مراقبہ کرنا تھا جس میں اسے اپنے اردگرد کسی بھی شخص سے10دن تک بالکل کچھ نہیں بولنا تھا۔اس کا کہنا تھا کہ ابتداءمیں تو ایسا کرنا انتہائی عجیب کام لگا لیکن وقت گزرنے کے ساتھ اسے انتہائی حیران کن واردات دیکھنے کا موقع ملا۔”جب آپ اپنے اردگرد کسی سے بھی بات نہیں کرتے،انہیں دیکھتے بھی نہیں، ان کی بات سنتے بھی نہیں اور کسی بھی بات پر غور نہیںکرتے تو آپ کو یہ موقع ملتا ہے کہ آپ اپنے اندر جھانکتے ہیں۔آپ کو اپنے اندر سے آواز آتی ہے اور آپ اپنے اردگرد توجہ دینے کی بجائے اپنے اندر موجود انسان کی سنتے ہیں۔“ اس کا مزید کہنا تھا کہ ایسا کرتے ہوئے اسے احسا س ہوا کہ ہرچیز وقتی ہے اور کوئی بھی کام دائمی نہیں۔اس کا کہنا ہے کہ جب آپ بہت تیز رفتاری سے گاڑی چلاتے ہیں تو آپ کے اطراف کے نظارے دھندلے لگتے ہیں لیکن جب آپ اشارے پر رکتے ہیں توآپ کو تمام چیزیں واضح نظر آنے لگتی ہیں۔”بالکل ایسا ہی تجربہ مجھے خاموشی اختیار کرکے ہوا اور مجھے اپنے اطراف کی چیزیں صاف اور واضح دیکھنے کو ملیں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...