ہائیکورٹ نے بچوں کا ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں داخلہ بحال کردیا،جواب بھی طلب

ہائیکورٹ نے بچوں کا ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں داخلہ بحال کردیا،جواب بھی طلب
ہائیکورٹ نے بچوں کا ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں داخلہ بحال کردیا،جواب بھی طلب

  


لاہور(نامہ نگارخصوصی )لاہور ہائیکورٹ نے بچوں کا ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں داخلہ روکنے کے خلاف حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے ڈی ایچ اے انتظامیہ سے 20جون تک جواب طلب کر لیاہے۔

سانحہ ماڈل ٹاﺅن کی جوڈیشل انکوائری کو منظر عام پر لانے کی درخواستیں 3برسوں سے فیصلے کی منتظر

جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے آصف بشیر مرزا ایڈووکیٹ کی درخواست پر سماعت کی، درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ درخواست گزار ڈی ایچ اے سپورٹس کلب کا ممبر ہے، تمام فیسیں بھی دے رکھی ہیں، ڈی ایچ اے سپورٹس کلب کے رولز کے مطابق ممبر کی فیملی بھی سپورٹس کلب میں سہولیات لے سکتی ہے لیکن ڈی ایچ اے انتظامیہ درخواست گزار کے بچوں کو کلب میں داخلے کی اجازت نہیں دے رہی، ڈی ایچ اے کے وکیل نے موقف اختیار کیا کہ درخواست گزار کے بچے کلب کی پالیسی میں نہیں آتے، اس لئے بچوں کا داخلہ کلب میں روکا گیا ہے، عدالت نے عبوری بحث سننے کے بعد بچوں کا ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں داخلہ روکنے کیخلاف حکم امتناعی جاری کرتے ہوئے ڈی ایچ اے انتظامیہ سے 20جون تک جواب طلب کر لیا، حکم امتناعی کے بعد درخواست گزار نے بتایا کہ اب تمام ممبرز کے بچے بھی ڈی ایچ اے سپورٹس کلب میں انجوائے کر سکیں گے۔

مزید : لاہور


loading...