مربوط حکمت عملی کی بدولت پولیو کا مکمل خاتمہ ممکن ہے ،کرسٹین مونڈانٹیڈ

مربوط حکمت عملی کی بدولت پولیو کا مکمل خاتمہ ممکن ہے ،کرسٹین مونڈانٹیڈ

پشاور( سٹاف رپورٹر )اقوام متحدہ کے ادارہ اطفال یونیسیف کی نائب سربراہ کرسٹین مونڈانٹیڈ خیبر پختونخوا میں پولیو کے خاتمہ کی کامیاب کاوشوں کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ انسداد پولیو کے لئے یونین کونسل کی سطح پر مربوط حکمت عملی اور موثرحکمت عملی کے ذریعہ پولیو کا مکمل خاتمہ ممکن ہے انہوں نے ان خیالات کا اظہار اپنے دورہ پشاور کے موقع پر پولیو کے حوالہ سے ہائی رسک یونین کونسل شاہین مسلم ٹاؤن میں بنیادی صحت مرکز میں عملہ سے بات چیت کرتے ہوئے کیا اس موقع پر یونیسیف کے شعبہ ہیلتھ اینڈ نیوٹریشن کے سربراہ کینیڈی اونگوا، چیف فیلڈ آفیسر چارلس نزوکی، ہیلتھ سپیشلسٹ ڈاکٹر جمیل، پولیو ٹیم لیڈر ڈاکٹر جوہرخان، ڈپٹی لیڈر ہما عارف، ڈبلیو ایچ او کے ڈاکٹر عبدی اور ابراہیم یلاہو بھی موجود تھے اقوام متحدہ کے ان حکام نے شاہین مسلم ٹاؤن میں ویکسی نیشین عملہ سے ملاقات کی اور پولیو کے خاتمہ کے ضمن میں کی جانے والی کاوشوں سے آگاہی حاصل کی انہوں نے صوبہ خیبر پختونخوا میں ایمرجنسی آپریشن سنٹر کے زیراہتمام پولیو کے خاتمہ کے لئے صوبائی حکومت، محکمہ صحت، ای پی آئی اور معاون بین الاقوامی اداروں کی جانب سے اٹھائے گئے اقدامات کو سراہا اور کہا کہ ان اداروں اور پولیو رضاکاروں کی دن رات انتھک محنت کے نتیجہ میں خطہ میں پولیو کے مصدقہ کیسوں میں نمایاں کمی آئی ہے جو انسداد پولیو کی جانب اہم پیش رفت ہے تاہم ضرورت اس امر کی ہے کہ حکومت اور پارٹنر اداروں کے حکام کی موثر نگرانی کے تحت ایک مربوط حکمت عملی سے کام کیا جائے مس کرسٹین نے اس امید کا اظہار کیا کہ پولیو کے خاتمہ کے لئے معمول لی ویکسی نیشن کے عمل کع مزید بہتر انداز میں جاری رکھا جائے گا۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر


loading...