حصہ کم ملنے کا تنازع، ملتان شہر میں تجاوزات کیخلاف آپریشن ناکام

حصہ کم ملنے کا تنازع، ملتان شہر میں تجاوزات کیخلاف آپریشن ناکام

  

ملتان (سپیشل رپورٹر)میونسپل کارپوریشن ملتان کا شہر بھر میں تجاوزات کے خلاف آپریشن آفیسران اور چیئرمینوں کے درمیان ’’حصہ‘‘ کے تنازع کے باعث ناکام ہو کر رہ گیا ہے بتایا گیا(بقیہ نمبر23صفحہ12پر )

ہے کہ میونسپل کارپوریشن کے انکروچمنٹ سیل کی جانب سے رمضان المبارک سے قبل بھرپور آپریشن کیاجارہا تھا لیکن شہر سے تجاوزات ختم ہونے کا نام نہیں لے رہی ہے۔ گذشتہ دو روز قبل سی او میونسپل کارپوریشن احمد نواز وٹو اور ملازمین کے درمیان جھگڑاور بعد ازاں کاروائی ’’حصہ‘‘ کی کمی کے باعث ہوئی ہے، انکروچمنٹ سیل کی جانب سے سی او کو ایک لاکھ روپے ماہانہ، دودھ، پھل، بوتلوں سمیت دیگر اشیائے صرف کی فراہمی کی جارہی تھی، میئر ملتان نوید الحق آرائیں کی جانب سے رمضان المبارک میں تجاوزات کیخلاف آپریشن نہ ہونے کے باعث شہریوں سے بھتہ وصولی نہ ہوسکی اور سی او ملتان کو ایک لاکھ روپے بجائے 65 ہزار روپے دیئے گئے جس کے باعث سی او اور ملازمین کے درمیان تنازع شروع ہو گیا۔جبکہ دوسری طرف دیگر آفیسران اور چیئرمینوں کی جانب سے بھی تجاوزات سیل سے حصہ مانگنا معمول بن گیا ہے جس سے شہر بھر میں تجاوزات کے خلاف آپریشن ’’حصہ‘‘ کے باعث ناکامی کا شکار ہو گیا ہے۔ چیئرمین انکروچمنٹ کمیٹی اکبر لعل نے کہا ہے کہ بھتہ مافیا سی او پر الزامات لگا رہے ہیں میئر ملتان کی ہدایت پر ہر صورت میں ملتان کو تجاوزات سے پاک کرکے خوبصورت بنایا جائے گا تجاوزات سیل سے بھتہ کو ختم کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جائیں گے۔ چیف آفیسر میونسپل کارپوریشن نے کہا ہے کہ ملک اصغر، جعفر، ارشد بدنام زمانہ ہیں اور تجاوزات آپریشن کے بجائے بھتہ وصول کر رہے تھے انکے خلاف کاروائی پر میرے خلاف احتجاج شروع کردیا ہے تجاوزات کے خلاف بھرپور آپریشن شروع کردیا گیا ہے اور تجاوزات کے خاتمہ تک آپریشن جاری رہے گا۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -