سان فرانسسکو میں پارسل کمپنی کے احاطے میں نامعلوم مسلح شخص کی اندھا دھند فائرنگ ،4 افراد ہلاک 2 زخمی ،حملہ آور نے گولی مار کر اپنی زندگی کا بھی خاتمہ کر لیا

سان فرانسسکو میں پارسل کمپنی کے احاطے میں نامعلوم مسلح شخص کی اندھا دھند ...
سان فرانسسکو میں پارسل کمپنی کے احاطے میں نامعلوم مسلح شخص کی اندھا دھند فائرنگ ،4 افراد ہلاک 2 زخمی ،حملہ آور نے گولی مار کر اپنی زندگی کا بھی خاتمہ کر لیا

  


سان فرانسسکو(ڈیلی پاکستان آن لائن)  کیلی فورنیا کے  علاقے سان فرانسسکو میں واقع  امریکی پارسل کمپنی یو پی ایس کی  برانچ پر ایک نامعلوم مسلح شخص نے فائرنگ کر کے4 افراد کو قتل اور 2   کو   شدید  زخمی  کرنے کے بعد خود کو بھی  گولی مار کر اپنی زندگی کا خاتمہ کر لیا ،پولیس نے واقعہ میں دہشت گردی کے عنصر کو مسترد کر دیا ۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق سان فرانسسکو میں واقع امریکی پارسل ڈیلیوری سروس کمپنی ’’یو پی ایس‘‘ کی برانچ پر ایک نامعلوم مسلح ضملہ آور شخص نے اچانک فائرنگ شروع کر دی جس سے موقع پر ہی 4  افراد ہلاک اور 2 زخمی ہو گئے ،حملہ آور نے بعد ازاں خود کو گولی مار کر خود کشی کر لی ۔سان فرانسسکو کے قائم مقام پولیس چیف ٹونی چیپلن نے میڈیا  کو بتایا کہ مسلح شخص کی شناخت نہیںہوئی،حملہ آور  نے پارسل ڈیلیوری سروس کی وردی پہن رکھی تھی۔ ٹونی  چیپلن نے بتایا کہ بادی النظر میں یہ واقعہ دہشت گردی سے منسلک نظر نہیں آتا۔یوپی ایس  کمپنی کے ترجمان اسٹیو گوٹ نے بتایا کہ ایک غیر مطمئن ملازم نے کمپنی کے احاطے کے اندر فائرنگ کی۔ سان فرانسسکو کے میئر نے کہا کہ ہم ہمیشہ سے ایسے بندوق سے ہوئے حملوں سے پریشان ہیں، یہ واقعی تشویشناک بات ہے کہ اس طرح کے بندوق سے ہو رہے حملے عام بات ہو گئی ہے۔دوسری طرف مقامی پولیس نے علاقے کو چاروں طرف سے گھیر کر تلاشی شروع کر دی ہے۔ مقامی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق حملے کے متاثرین کو ہسپتال  منتقل کر دیا گیا ہے تاہم  یقینی طور پر  نہیں  کہا جا سکتا کہ کتنے لوگوں کو ہسپتال لے جایا گیا ہے اور ان کی حالت کیسی ہے؟۔ قابل ذکر ہے کہ مقامی ٹی وی  چینلز کی طرف سے چلائی جا رہی فوٹیج میں پولیس کی طرف سے بہت سے لوگوں کو عمارت سے باہر نکالتے ہوئے دیکھا گیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی


loading...