کراچی سینٹرل جیل سے کالعدم جماعت کے دو دہشتگرد فرار ،سپرٹینڈنٹ اور ڈپٹی سپرٹینڈنٹ سمیت 12پولیس اہلکاروں کو گرفتار کر لیا گیا

کراچی سینٹرل جیل سے کالعدم جماعت کے دو دہشتگرد فرار ،سپرٹینڈنٹ اور ڈپٹی ...
کراچی سینٹرل جیل سے کالعدم جماعت کے دو دہشتگرد فرار ،سپرٹینڈنٹ اور ڈپٹی سپرٹینڈنٹ سمیت 12پولیس اہلکاروں کو گرفتار کر لیا گیا

  


کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن )کراچی سینٹرل جیل سے دو انتہائی خطرناک ترین دہشتگرد قیدی فرار ہو گئے ہیں جن کی نشاندہی کر کے گرفتار کرنے والے شخص کو 50لاکھ روپے انعام دینے کا اعلان بھی کر دیا گیاہے ۔

تفصیلات کے مطابق سینٹرل جیل کراچی سے کالعدم جماعت کے دو خطرناک دہشتگرد فرار ہو گئے۔ دونوں قیدی سینٹرل جیل میں جوڈیشل کمپلیکس میں پیشی کیلئے آئے تھے۔ ملزم شیخ محمد عرف فرعون اور احمد خان عرف منا کو 2013 میں سی ٹی ڈی افسر فیاض خان نے گرفتار کیا تھا۔ دونوں ملزموں کا تعلق نعیم بخاری گروپ سے تھا، جو فرقہ وارانہ قتل اور پولیس پر حملوں میں ملوث تھے۔ احمد منا کو ایک کیس میں دس سال قید کی سزا بھی ہو چکی تھی۔

وزیر قانون و جیل خانہ جات کے حکم پر سینٹرل جیل کے 12 اہلکارروں کو گرفتار کر لیا گیا، ان میں جیل سپرنٹنڈنٹ اور ڈپٹی جیل سپریٹنڈنٹ بھی شامل ہیں۔ ڈی آئی جی جیل خانہ جات کی مدعیت میں ملزمان اور جیل کے 12 اہلکاروں کے خلاف مقدمہ بھی درج کر لیا گیا ہے۔

دوسری جانب آئی جی سندھ کی جانب سے دہشتگردوں کی نشاندہی کر کے انہیں گرفتار کرنے والے شخص کو 50لاکھ روپے انعام دینے کااعلان بھی کر دیا گیاہے ۔

مزید : قومی


loading...