سعد رفیق کا قومی و صوبائی اسمبلی کے2 حلقوں سے الیکشن لڑنے کا فیصلہ

سعد رفیق کا قومی و صوبائی اسمبلی کے2 حلقوں سے الیکشن لڑنے کا فیصلہ

لاہور (جنرل رپورٹر)مسلم لیگ(ن) کے رہنماء خواجہ سعد رفیق نے لاہور سے قومی و صوبائی اسمبلی کے دو حلقوں سے الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا ہے اور جس کیلئے انہوں نے اپنے کاغذات نامزدگی باقاعدہ جمع کروائے جنہیں متعلقہ ریٹرنگ آفیسر نے منظور کرتے ہوئے انہیں الیکشن لڑنے کی اجازت دیدی ۔ خواجہ سعد رفیق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 131 اور صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 157 سے الیکشن لڑینگے۔سابق وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن نے نئی حلقہ بندیوں کے دوران مختلف حلقوں سے وہ تمام علاقے نکال دئیے جہاں پر مسلم لیگ(ن) نے ترقیاتی کام کرائے۔ انہوں نے کہا کہ وہ کسی کی ذات پر نکتہ چینی کرنا پسند نہیں کرتے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف نے ملک کی ترقی سے مسلم لیگ ن کو متعارف کروایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وہ عمران خان پر بات نہیں کرینگے جبکہ سیاست دان کو ایک سیاستدان کا سیاست میں مقابلہ کرنا چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ ہر سیاسی جماعت میں ایک سے بڑھ کر ایک بڑا آدمی ہے اور سیاسی مسائل کو سیاسی اندازمیں ہی حل کرنا چاہئے۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما و سابق وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ تمام سزائیں نواز شریف کیلئے ہیں،ووٹ کوعزت دو کے بیانیے پر الیکشن لڑیں گے،چوہدری نثار کو منانے کی بہت کوشش کی لیکن کامیاب نہیں ہوسکے۔ لاہور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ عمران خان کے طرز سیاست سے اختلاف ہے، لیکن سیاسی حیثیت میں کسی پر اعتراض نہیں کرتے،عمران خان نے جمہوریت کو بہت نقصان پہنچایا لیکن اس کے باوجود ان کے کاغذات نامزدگی پر اعتراض نہیں اٹھائے۔خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ تمام سزائیں نواز شریف کیلئے ہیں، ووٹ کوعزت دو کے بیانیے پر الیکشن لڑیں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ این اے 125 کو تقسیم کردیا گیا ہے، جن علاقوں میں انہوں نے ترقیاتی کام کرائے وہ اس حلقے کا حصہ نہیں ہیں۔

سعد رفیق

مزید : صفحہ اول