پی آئی اے پرواز کے ایمرجنسی سلائیڈ کھلنے کے معاملہ کی تحقیقات شروع

پی آئی اے پرواز کے ایمرجنسی سلائیڈ کھلنے کے معاملہ کی تحقیقات شروع

اسلام آباد (آ ئی این پی)پی آئی اے کی پرواز پی کے 702کے ایمرجنسی سلائیڈ کھلنے کے معاملے پر تحقیقاتی کمیٹی قائم کر دی گئی، وفاقی وزیر برائے ہوا بازی غلام سرورخان نے کہا تحقیقاتی کمیٹی نے پرواز پر تعینات فضائی میزبانوں کے بیان قلمبندکرلیے ہیں،غلام سرور خان نے بتایاکہ کمیٹی کے سربراہ چیف پائلٹ کارپوریٹ سیفٹی کیپٹن عامر آفتاب ہوں گے، تحقیقاتی کمیٹی نے تحقیقات شروع کردی،غلام سرور خان نے مزید کہا مانچسٹر سے اسلام آباد آنے والی پی آئی اے کی پرواز پرتعینات فضائی میزبانوں کے بیان قلمبند کر لئے گئے ہیں، فضائی میزبانوں نے تحقیقاتی کمیٹی کو شارٹ کریو اور مسافر خاتون سے متعلق معلومات فراہم کیں، واقعے سے قبل فضائی میزبان مسافروں کو جہاز میں ایمرجنسی سے متعلق ڈیمونسٹریشن پیش کررہی تھی۔وفاقی وزیر برائے ہوا بازی کا کہنا تھا ایمر جنسی دروازہ کھولنے والی مسافر خاتون 74 الفا سیٹ پر موجود تھیں، تحقیقاتی کمیٹی دوسرے مرحلے میں خاتون مسافر سے رابطہ کر کے ان کا بیان بھی ریکارڈ کرے گی۔فضائی میزبان نے اپنے بیان میں کہا کہ خاتون مسافر نے بوئنگ 777 طیارے کے ایمرجنسی دروازہ ایل فائیو کو باتھ روم سمجھ کر کھول دیاتھا۔بوئنگ 777 طیارے میں 10 دروازے میں ہوتے ہیں ہر دروازے پر فضائی میزبان کا موجو د ہونا لازمی ہے، فضائی میزبانوں کی کمی کی وجہ سے واقعہ پیش آیا، پرواز پی کے 702 ایئر ٹریفک کنٹرول کی کلیئرنس کے بعد روانگی کیلئے تیار ہو ئی۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر