فوادچوہدری اور سمیع ابراہیم کے جھگڑے میں ثنا بچہ بھی کود پڑیں

فوادچوہدری اور سمیع ابراہیم کے جھگڑے میں ثنا بچہ بھی کود پڑیں
فوادچوہدری اور سمیع ابراہیم کے جھگڑے میں ثنا بچہ بھی کود پڑیں

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیرسائنس و ٹیکنالوجی فوادحسین چوہدری نے فیصل آباد میں ایک شادی کی تقریب کے دوران سینئر صحافی اور اینکر پرسن سمیع ابراہیم کو تھپڑماردیا جس کی مذمت بھی کی جارہی ہے اور اب ان دونوں صاحبان کے اس جھگڑے میں ثنا بچہ بھی کود پڑیں ۔

خاتون نے ٹوءٹر پر لکھا کہ ’’ فوادچوہدری کو تھپڑنہیں مارناچاہیے تھا ، البتہ بھٹی صاحب کو کوئی بتادے کہ سمیع ابراہیم نے آمریت کا اتنا ہی مقابلہ کیا ہے ، جتنا بھٹی صاحب نے اے آروائے کا کیا ہے‘‘ ۔

وہ دراصل عارف حمید بھٹی کے اس ٹوئیٹ پر جواب دے رہی تھیں جس میں انہوں نے کہا تھا کہ ’’طمانچہ سمیع ابراہیم کے چہرے پر نہیں ،پاکستان کی صحافت اور جمہوریت کے منہ پر ہے ۔ صحافی اور صحافی یونین، پریس کلب اس آمرانہ عمل پر احتجاج کرتے ہیں ۔ فواد چودھری کو سزا دینا ہوگی ۔ آمریت کا مقابلہ کرنے والے صحافیوں کو دبایا نہیں جا سکتا‘‘ ۔

ثنا بچہ کے ٹوئیٹ پر سائرہ شیراز نے لکھا کہ ’’سمیع ابراہیم نے جو کنواں دوسروں کو گرانے کیلئے کھودا تھا ، اسی میں وہ جا کر گر گیا ہے،اس نے ایک سیاسی جماعت کو نیچا دکھانے کیلئے صحافتی اصولوں کی دھجیاں بکھیر دی ہیں اور آمریت کیخلاف قربانی دینے والے اصل ہیرو صحافی اور ہیں ، موصوف نہیں ‘‘ ۔

 

 

مزید : ڈیلی بائیٹس