کورونا پھیلاؤ، تیز سندھ میں مویشی منڈیاں لگانے کی اجازت منسوخ کر دی گئی

  کورونا پھیلاؤ، تیز سندھ میں مویشی منڈیاں لگانے کی اجازت منسوخ کر دی گئی

  

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)سندھ حکومت نے صوبے میں کورونا وائرس کے کیسز کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر عیدالاضحیٰ کے موقع پر قربانی کے جانوروں کی فروخت کیلئے مویشی منڈیاں نہ لگانے کا فیصلہ کیا ہے۔محکمہ بلدیات اور ٹاؤن پلاننگ کی جانب سے متعلقہ حکام کو جاری خط میں کہا گیا ہے کہ صوبے میں مویشی منڈیوں کو حکومتی ایس او پیز کے تحت لگانے کی اجازت دینے کیلئے 2 اور 3 جون کو جاری کیے گئے نوٹی فکیشن کو واپس لیا جاتا ہے۔سیکریٹری بلدیات روشن علی شیخ نے کہا کہ محکمہ بلدیات نے مویشی منڈیوں کے حوالے سے اپنی سفارشات واپس لے لی ہیں اور محکمہ داخلہ کو خط لکھ دیا گیا ہے۔ صوبے میں کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے پیش نظر مویشی منڈیوں کی اجازت نہیں دی جاسکتی اسی لیے محکمہ داخلہ سے گزارش کی ہے کہ ایسے تمام اجازت نامے منسوخ کردیے جائیں۔خیال رہے کہ چند روز قبل ہی محکمہ بلدیات نے سندھ میں ایس او پیز کے تحت مویشی منڈیاں لگانے کی اجازت دی تھی۔محکمہ بلدیات سندھ نے مویشی منڈیوں کے لیے ایس او پیز بھی تیار کرلی تھیں جس کے مطابق تمام ٹاؤن، میونسپل کمیٹیوں، ڈسٹرکٹ کونسلز اور میونسپل کارپوریشنز کی حدود میں مویشی منڈیاں لگانے کی اجازت دی گئی تھی۔سندھ حکومت نے کہا تھا کہ ایس او پیز کے مطابق مویشی منڈی میں خریداروں کے لیے الگ اور بیوپاریوں کے لیے دو الگ قطاریں لگائی جائیں گی۔مویشی منڈی میں جانوروں کی خرید و فروخت کے دوران 3 سے 6 فٹ کا سماجی فاصلہ برقرار رکھنا لازمی قرار دیا گیا تھا اور منڈی میں آنے والے تمام شہریوں کے لیے ماسک پہننا بھی لازمی قرار دیا گیا تھا۔

مویشی منڈیاں

مزید :

صفحہ آخر -