”دورہ انگلینڈ میں فکسنگ ہو سکتی ہے“ سہیل تنویر نے پریشان کن دعویٰ کر دیا

”دورہ انگلینڈ میں فکسنگ ہو سکتی ہے“ سہیل تنویر نے پریشان کن دعویٰ کر دیا
”دورہ انگلینڈ میں فکسنگ ہو سکتی ہے“ سہیل تنویر نے پریشان کن دعویٰ کر دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) قومی کرکٹ ٹیم کے آل راﺅنڈر سہیل تنویر نے دورہ انگلینڈ میں فکسنگ کے خدشات ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ سیریز میں سوشل میڈیا کے زیادہ استعمال سے کرپشن کے خدشات بڑھ سکتے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق سہیل تنویر نے ویڈیو لنک کے ذریعے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دورہ انگلینڈ میں خالی سٹیڈیم اور تنہائی کے دوران سوشل میڈیا کا زیادہ استعمال ہوگا،اس سے کھلاڑی آسان ہدف بن سکتے ہیں، بکیز ان سے رابطے کیلئے سوشل میڈیا کا استعمال کرتے ہیں، دورہ انگلینڈ میں ہر پلیئرکو ہوشیار اور محفوظ رہنا ہو گا کیونکہ جب تک وہ نہ چاہیں بکیز اپنے مقصد میں کامیاب نہیں ہوسکتے۔

انہوں نے کہا کہ مجھے پاکستان ٹیم میں شامل نہ ہونے کا دکھ ہے، سلیکٹرز نے میرے نام پر غورضرور کیا مگر شاید ٹیسٹ کرکٹ نہ کھیلنے کی وجہ سے منتخب نہیں ہوسکا،ابھی میرا ریٹائرمنٹ کا کوئی ارادہ نہیں،ہمارے یہاں کم بیک کسی بھی عمر میں ہوسکتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ٹیم میں جونیئرز کے ساتھ سینئر باﺅلرز کا ہونا ضروری ہے،اس سے نوجوانوں کو سیکھنے کا موقع ملتا ہے، 1 یا 2 میچز کی کارکردگی پر کسی کو انٹرنیشنل کرکٹ نہیں کھیلانی چاہئے، اسی کے ساتھ سلیکٹرز کو ڈومیسٹک کرکٹ میں پرفارم کرنے والوں کو اہمیت دینا ہوگی۔

سہیل تنویر نے کہا کہ فاسٹ باﺅلرز کیلئے گیند کو چمکانا بہت ضروری ہے،تھوک کے استعمال پر پابندی کی وجہ سے انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کو گیند چمکانے کیلئے متبادل طریقہ بتانا ہوگا، ایس او پیز کے باعث وکٹ لینے کے بعد باﺅلرز خوشی کا اظہار کیسے کرتے ہیں یہ دیکھنا دلچسپ ہو گا۔ انگلینڈ کا غیر مشروط دورہ پی سی بی کا فیصلہ ہے، کرکٹر کی حیثیت سے میں سمجھتا ہوں کہ پاکستان میں زیادہ کرکٹ ہونی چاہیے،جب ہماری باری آئے تو انگلش ٹیم کو بھی یہاں آنا ہو گا۔

مزید :

کھیل -