پاکستان کا مقبوضہ وادی میں کھلی کچہری کا موقع فراہم کرنے کا مطالبہ

پاکستان کا مقبوضہ وادی میں کھلی کچہری کا موقع فراہم کرنے کا مطالبہ
پاکستان کا مقبوضہ وادی میں کھلی کچہری کا موقع فراہم کرنے کا مطالبہ

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے مقبوضہ کشمیر میں کھلی کچہری مطالبہ کر دیا،شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ بھارتی اقدامات کوکوئی کشمیری تسلیم نہیں کرتا،کشمیر کی تقسیم کوکسی نے تسلیم نہیں کیا،بھارت 7 بار سلامتی کونسل کاممبر رہاہے،بھارت کے سلامتی کونسل ممبر بننے سے کوئی قیامت نہیں آئےگی۔

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ بھارت سلامتی کونسل کی قراردادوں کواہمیت کیوں نہیں دے رہا،میرے خطوط سلامتی کونسل کے ریکارڈ کاحصہ ہیں،شاہ محمود قریشی نے کہاکہ توقع تھی کووڈ 19 کے بعد بھارتی رویے میں نرمی آئےگی،بھارت کامقبوضہ کشمیر میں ظلم برقرار ہے،اوآئی سی ممالک کوبھی خطوط لکھے ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہاکہ دلی کے واقعات ہم بھولے نہیں،آپ اسے چھپانہیں سکتے،شہریت بل پربھارتی اپوزیشن سراپا احتجاج ہے،شاہ محمود قریشی نے کہاکہ بھارت چین اورنیپال کےساتھ گفت وشنیدکے وعدے کرتارہا،کونسا ملک ہے جو آج بھارتی اقدامات سے مطمئن ہو۔

انہوں نے کہاکہ بھارت کے ہمسایوں کوہندوتوا سوچ پرتشویش ہے،بھارت انسانی حقوق کوپامال کررہا ہے،دنیا دیکھ رہی ہے،انہوں نے کہاکہ بھارت میں مسلمانوں کے ساتھ امتیازی سلوک کیا جارہا ہے۔

مزید :

قومی -علاقائی -اسلام آباد -