مال نہیں ، اعمال پر توجہ دیں،شہباز شریف کا حکومت کو مشورہ 

مال نہیں ، اعمال پر توجہ دیں،شہباز شریف کا حکومت کو مشورہ 
مال نہیں ، اعمال پر توجہ دیں،شہباز شریف کا حکومت کو مشورہ 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن ) مسلم لیگ (ن ) کے صدر اورقائد حزب اختلاف شہباز شریف نے کہا ہے کہ پوری قوم آج وزیر اعظم عمرا ن خان سے ایک کروڑ نوکریوں کے بارے جواب مانگ رہی ہے، ریاست مدینہ کا ذکر کرنے والے شرم کریں ، ملک میں مہنگائی کی شرح میں تشویشناک حد تک اضافہ حکومت کا کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ وفاقی حکومت مال کو چھوڑ کر اعمال کی طرف توجہ کرے۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے شہباز شریف کا کہنا تھا کہ کل ایوان میں میر ی تقریر کے دوران جان بوجھ کر حکومتی بینچز کی جانب سے ہلڑ بازی کی گئی، تاریخ میں ایسا کبھی نہیں ہواکہ اپوزیشن بات کرے اور حکومت احتجاج کرے۔ سپیکر اسد قیصر کو مخاطب کرتے ہوئے قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ گزشتہ روز ایوان کا تقدس آپ نے مجروح کرایا ہے اور آپ کا یہ جرم تاریخ کبھی نہیں معاف نہیں کرے گی ، آپ ہی کو اس کا ذمہ دار ٹھہرایا جائے گا۔

قائد حزب اختلاف کا کہنا تھا کہ ہماری حکومت نے جی ڈی پی گروتھ 5.8فیصد تھی اور پھر اس ملک پر عمرا ن نیاز ی مسلط ہوگیا ، موجود ہ حکومت کے پہلے سال میں جی ڈی پی کی شرح تین فیصد سے بھی کم تھی اور آج تین سالوں میں معیشت کی بربادی سب کے سامنے ہے۔ غریب کا چولہا نہیں جل رہا ہے اور لوگ وزیر اعظم کوبددعائیں دے رہے ہیں۔

اجلاس کے دوران حکومتی اراکین کی جانب سے شہباز شریف کی تقریرکے دوران شدید ہنگامہ آرائی کی گئی اور مسلم لیگ (ن) کے خلاف نعرہ بازی بھی کی گئی ۔ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر ایوان کے ماحول کو بدنظمی سے بچانے کی کوشش کرتے رہے مگر نا کام رہے جس کے بعد اجلاس کو 20منٹ کے لئے ملتوی کردی گیا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -سیاست -علاقائی -اسلام آباد -