چین کی بڑھتی ہوئی عسکری قوت نے نیٹو کی پریشانی بھی بڑھا دی ،اہم اجلاس کی کہانی سامنے آگئی

چین کی بڑھتی ہوئی عسکری قوت نے نیٹو کی پریشانی بھی بڑھا دی ،اہم اجلاس کی ...
چین کی بڑھتی ہوئی عسکری قوت نے نیٹو کی پریشانی بھی بڑھا دی ،اہم اجلاس کی کہانی سامنے آگئی

  

برسلز(محمد عاطف حسین)بیلجیم کے دارالحکومت برسلز میں اجلاس کے دوران ملاقات میں نیٹو رہنماوں نے چین کی عسکری طاقت کے حوالے سے خدشات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ چین کا رویہ ایک ’چیلنج‘ ہے۔

چین کے بارے میں بات کرتے ہوئے نیٹو رہنماو¿ں کا کہنا ہے کہ چین اپنی جوہری ہتھیاروں کی تعداد میں تیزی سے اضافہ کر رہا ہے، اپنی فوج کو جدید خطوط پر استوار کرنے کے لیے خفیہ طور پر کام کر رہا ہے اور روس کے ساتھ عسکری تعاون کر رہا ہے۔نیٹو کے سربراہ جینس سٹولٹنبرگ نے تنبیہ کی ہے کہ چین نیٹو کی عسکری اور تکنیکی صلاحیتوں کے ’قریب‘ پہنچ رہا ہے لیکن ساتھ ساتھ انہوں نے یہ بھی کہا ہے کہ نیٹو اتحاد چین کے ساتھ ایک نئی سرد جنگ نہیں چاہتا۔واضح رہے کہ نیٹو 30 یورپی اور شمالی امریکی ممالک کا ایک انتہائی اہم اور طاقتور سیاسی اور عسکری اتحاد ہے جو کہ دوسری جنگ عظیم کے بعد کمیونسٹ خطرے سے نمٹنے کے لیے قائم کیا گیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -